پاکستان میں 7 وہابی دہشت گردوں کو موت کی سزا

پاکستان میں فوجی عدالتوں نے پشاور میں آرمی پبلک اسکول حملے اور سانحہ صفورہ میں ملوث 7 وہابی دہشت گردوں کو سزائے موت اور ایک کو عمر قید کی سزا سنائی ہے جب کہ پاکستانی آرمی چیف نے فیصلے کی توثیق کردی ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے پاکستانی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان میں فوجی عدالتوں نے پشاور میں آرمی پبلک اسکول حملے اور سانحہ صفورہ میں ملوث 7 وہابی دہشت گردوں کو سزائے موت اور ایک کو عمر قید کی سزا سنائی ہے جب کہ پاکستانی آرمی چیف نے فیصلے کی توثیق کردی ہے۔پاکستانی  فوج کے شعبہ تعلقات کے مطابق فوجی عدالتوں نے پشاور کے آرمی پبلک اسکول اور سانحہ صفورہ چورنگی کراچی میں ملوث 7 دہشت گردوں کو سزائے موت اور ایک کو عمر قید کی سزا سنائی ہے۔ ترجمان کے مطابق دہشت گردوں کا ٹرائل آرمی ایکٹ 2015 کے تحت کیا گیا جب کہ آرمی چیف جنرل راحیل شریف نے بھی دہشت گردوں کو دی جانے والی سزاؤں کی توثیق کردی ہے۔ترجمان پاک فوج کےمطابق سانحہ آرمی پبلک اسکول میں ملوث دہشت گردوں میں مجیب الرحمان، الیاس یحییٰ، مولوی عبدالسلام، تاج محمد، اور عتیق الرحمان  شامل ہیں۔واضح رہے کہ پشاور میں آرمی پبلک اسکول پر حملے کے نتیجے میں 125 بچے شہید اور 147 افراد زخمی ہوئے تھے جب کہ سانحہ صفورا میں دہشت گردوں نے رینجرز اہلکاروں پر حملہ کیا جس میں 3 رینجرز اہلکار جاں بحق ہوگئے تھے۔

News Code 1857359

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • captcha