پنجاب کی مختلف جیلوں میں قتل کے 7 مجرموں کو پھانسی دیدی گئی

پاکستان کے صوبہ پنجاب کی مختلف جیلوں میں قتل کے مزید 7 مجرموں کو تختہ دار پر لٹکا دیا گیا ہے۔

مہر خبرررساں ایجنسی نے ایکسپریس نیوز کےحوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان کے صوبہ  پنجاب کی مختلف جیلوں میں قتل کے مزید 7 مجرموں کو تختہ دار پر لٹکا دیا گیا ہے۔ اطلاعات کے مطابق سینٹرل جیل فیصل آباد میں قتل کے 3 مجرموں کو علی الصبح تختہ دار پر لٹکا دیا گیا، اس موقع پر سکیورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کئے گئے تھے۔ مجرم نبیل احمد نے 2000 میں قتل کیا تھا جب کہ محمد سلیم اور محمد راشد نے 1998 میں قتل کیا تھا۔ ساہیوال سینٹرل جیل میں بھی سزائے موت کے 2 قیدیوں کو سولی پر پر لٹکا دیا گیا، مجرم فیاض نے 2003 میں ایک شخص کو قتل کیا تھا جب کہ مجرم قیصر نے 2004 میں ڈکیتی کے دوران مزاحمت پر ایک شخص کو قتل کیا تھا۔سینٹرل جیل میانوالی میں دوہرے قتل کے مجرم محمد اسلم خان کو پھانسی دے دی گئی، محمد اسلم نے 1997 میں 2 افراد کو قتل کیا تھا۔ گجرات کی جیل میں بھی سزائے موت کے قیدی اقبال عرف بالا کو پھانسی دے دی گئی، مجرم اقبال عرف بالا نے 1998 میں قتل کیا تھا جب کہ گجرات میں ہی منڈی بہالدین کے مجرم غلام رسول کی پھانسی عدالت کی جانب سے حکم امتنائی کے بعد موخر کر دی گئی، مجرم غلام رسول نے 15 سال قبل قتل کیا تھا۔

News Code 1855920

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 15 =