یمن کے نہتے مسلمان ،سعودی عرب کے ظلم و ستم کا شکار

مہر نیوز/24 مئی / 2015 ء : سعودی عرب کی یمن کے خلاف بربریت اور ظلم و ستم کا سلسلہ جاری ہے سعودی عرب حرمین شریفین کی آڑ میں مسلمانوں کی پشت میں خنجر گھونپ رہا ہے عالم اسلام میں بدامنی کا اصلی باعث اس وقت سعودی عرب ہے جو امریکہ کے اشاروں پر ناچ رہا ہے۔ مسلمان حج کے موقع پر شیطان کو پتھر مارتے ہیں ،آل سعود کی شکل میں شیطان آج بھی سعودی عرب میں موجود ہے۔ مسلمانوں کو چاہیے کہ وہ آل سعود کو پتھر مار کر حرمین شریفین سے بھگائیں۔

مہر خبررساں ایجنسی کے نامہ نگار کی رپورٹ کے مطابق سعودی عرب کی یمن کے خلاف بربریت اور ظلم و ستم کا سلسلہ جاری ہے سعودی عرب حرمین شریفین کی آڑ میں مسلمانوں کی پشت میں خنجر گھونپ رہا ہے عالم اسلام میں بدامنی کا اصلی باعث اس وقت سعودی عرب ہے جو امریکہ کے اشاروں پر ناچ رہا ہے۔ سعودی عرب نے اسلامی ممالک میں دہشت گردوں کے ذریعہ بد امنی پھلا کر عالم اسلام کی توجہ مسئلہ فلسطین سے ہٹا دی ہے اور یہی بات امریکہ اور اسرائیل سعودی عرب سے چاہتے تھے اور چاہتے ہیں۔ سعودی عرب آشکار خطے میں امریکی اور اسرائیلی مفادات کو تحفظ فراہم کررہا ہے۔ سعودی عرب کی حکومت اور سعودی حکمراں آج بھی ابوجہل و ابو لہب کے نقش قدم پر گامزن ہیں آج آل سعود اور سعودی عرب کی حکومت امریکی لات و ہبل اور عزی کے بتوں کی پرستش کررہی ہے۔ سعودی عرب بڑے شیطان امریکہ کے ساتھ ملکر یمن کے مسلمانوں کا قتل عام کررہا ہے ۔ سعودی عرب کے مکروہ ، بھیانک ، منافق اور ناپاک چہرہ عالم اسلام کے سامن روشن ہوگیا ہے کہ بیت المقدس پر یہودیوں اور حرمین شرفین پر سعودیوں کا قبضہ اور یہودی اور سعودی دونوں بڑے شیطان امریکہ کے ایجنٹ ہیں۔حرمین شریفین کو سعودی درندوں  سے بہت بڑا خطرہ لاحق ہوگیا ہے کیونکہ سعودی عرب امریکی اشاروں پر کچھ بھی کرسکتا ہے۔ سعودی عرب میں آج بھی مسلمان حج کے موقع پر شیطان کو پتھر مارتے ہیں آل سعود کی شکل میں شیطان آج بھی سعودی عرب میں موجود ہے۔ مسلمانوں کو چاہیے کہ وہ آل سعود کو پتھر مار کر حرمین شریفین سے بھگائیں۔

News Code 1855436

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 7 + 3 =