قزاقستان کے صدر نے کابینہ کو برطرف کردیا

قزاقستان کے صدر نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے اور عوامی مظاہروں کے بعد کابینہ کو برطرف کردیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے اسپوٹنک کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ قزاقستان کے صدر نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے اور عوامی مظاہروں کے بعد کابینہ کو برطرف کردیا ہے۔

اطلاعات کے مطابق قزاقستان کے صدر نے وزیراعظم عسکر مامن کا استعفیٰ قبول کرلیا ہے، نائب وزیراعظم نئی کابینہ کی تشکیل تک وزیراعظم کی ذمہ داریاں نبھائیں گے۔

دارالحکومت الماتے اور مغربی صوبےمنگیستو میں 19 جنوری تک ہنگامی حالت کا نفاذ کر دیا گیا ہے اور رات 11بجےسےصبح 7بجے تک کرفیو بھی نافذ رہے گا۔

واضح رہے کہ قزاقستان میں منگل سے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے پر مظاہرے جاری تھے، پولیس نےمظاہرین کو منتشر کرنے کیلئے آنسو گیس کی شیلنگ، اسٹن گرینیڈ کا استعمال کیا تھا۔

مظاہرین اور پولیس کے درمیان جھڑپوں میں 95 پولیس اہلکارزخمی ہوئے جبکہ 200 سے زائد مظاہرین کو گرفتار کرلیا گیا تھا۔

News Code 1909397

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 17 =