امریکہ نے غلط پالیسی اپنا کر خطے کو جنگ کے مرحلے تک پہنچادیا تھا

اسلامی جمہوریہ ایران کے وزير خارجہ نے امریکہ کی غلط اور نادرست پالیسیوں پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکی صدر نے غلط اور نادرست پالیسی اپنا کر خطے کو جنگ کے مرحلے تک پہنچا دیا تھا۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کے وزير خارجہ محمد جواد ظریف نے این بی سی کے ساتھ گفتگو میں امریکہ کی غلط اور نادرست پالیسیوں پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکی صدر نے غلط اور نادرست پالیسی اپنا کر خطے کو جنگ کے مرحلے تک پہنچا دیا تھا۔ جواد ظریف نے کہا کہ امریکہ نے غلط ونادرست اطلاعات اور غرور و تکبر کی  بنا پر علاقہ کو جنگ میں دھکیل دیا تھا۔

ایرانی وزیر خارجہ نے امریکہ اور ایران کے درمیان کشیدگی کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ دونوں ممالک کے درمیان کشیدگی کا سلسلہ جاری ہے۔ ایران کسی بھی قیمت پر امریکہ کی دھونس کو برداشت کرنے کے لئے امادہ نہیں۔  امریکہ نے میجر جنرل قاسم سلیمانی کو شہید کرکے تعلقات کو مزید کشیدہ بنادیا ہے ۔ امریکی حکام ایکطرف مذاکرات کے لئےالتماس اوردوسری طرف دھمکیوں کی زبان استعمال کررہے ہیں۔ امریکی وزير خارجہ کا خط بڑا تند اور بے ادبی پر مبنی تھا جس کا ایران نے جواب بھی تند ہی دیا۔

ایرانی وزیر خارجہ نے عراق میں امریکی ایئر بیس عین الاسد پر میزائل حملے کے بارے میں سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ ایران نے جوابی اور دفاعی کارروائی کرکے امریکہ پر ثابت کردیا کہ ایران امریکہ کے رعب و دبدبے میں آنے والا نہیں اور امریکہ کو اینٹ کا جواب پتھر سے دینے کے لئے آمادہ ہے۔

News Code 1897856

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 3 + 12 =