یمن آل سعود کے لئے ویتنام / وہابی اصل میں صہیونی ہیں

یمن کی اسلامی تنظیم انصار اللہ کے سربراہ عبد الملک الحوثی نے کہا ہے کہ سعودی عرب نے دنیا بھرسے وہابی دہشت گردوں کو یمنی عوام کے خلاف جنگ کے لئے اکٹھا کیا ہے لیکن یمن، آل سعود اور وہابی دہشت گردوں کے لئے ویتنام ثابت ہوگا وہابی دہشت گرد اسرائیل کے بجائے مسلمانوں کے خلاف جنگ میں حصہ لے رہے ہیں جو ان کے اصل میں یہودی اور صہیونی ہونے کی اہم علامت ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے العہد کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ یمن کی اسلامی تنظیم انصار اللہ کے سربراہ عبد الملک الحوثی نے کہا ہے کہ سعودی عرب نے دنیا بھرسے وہابی دہشت گردوں کو یمنی عوام کے خلاف جنگ کے لئے اکٹھا کیا ہے لیکن یمن آل سعود اور وہابی دہشت گردوں کے لئے ویتنام ثابت ہوگا۔

انھوں نے کہا کہ سعودی عرب یمنی عوام کے پختہ عزم اور حوصلوں کو پست کرنے میں ناکام ہوگیا ہے اور یمن کے خلاف جنگ میں سعودی عرب نے صرف ہولناک اور وحشیانہ جرائم  کا ارتکاب کیا ہے اور اس کے علاوہ سعودی عرب کو کوئی فوجی اور سیاسی کامیابی نصیب نہیں ہوئی اور نہ ہوگی۔

انصار اللہ کے رہنما نے امریکہ اور اسرائیل کی طرف سے سعودی عرب کی بڑے پیمانے پر حمایت کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ جس طرح امریکہ کو ویتنام میں تاریخی شکست ہوئی اسی طرح اس کے اتحادی سعودی عرب کو یمن میں شکست ہوگی۔  انھوں نے کہا کہ سعودی رعب امریکی ہتھیاروں کے ذریعہ یمنی عوام کے خلاف ہولناک جرائم کا راتکاب کررہا ہے اور سعودی اور یہودی دونوں  یمنی عوام کے خلاف ہیں ۔ انھوں نے کہا کہ آل سعود کے یہودی ہونے میں کسی کو شک و شبہ نہیں ۔ آل سعود حرمین شرفین کی آڑ میں اسلام اور مسلمانوں کے خلاف  گہری سازش  اور اسلامی ممالک میں وہابی دہشت گردوں کے ذریعہ عدم استحکام پیدا کررہا ہے انھوں نے کہا کہ وہابی دہشت گرد اسرائیل کے بجائے مسلمانوں کے خلاف جنگ میں حصہ لے رہے ہیں جو ان کے یہودی اور صہیونی ہونے کی اہم علامت ہے۔

News Code 1857091

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 5 + 0 =