سعودی عرب میں نئی بت پرستی وجود میں آگئی ہے

مجمع تشخیص مصلحت نظام کے سکریٹری نے اینسٹا گرام میں اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ سعودی عرب میں ایک نئی بت پرستی وجود میں آگئی ہے اور سعودی عرب کے حکام نے خود کو بڑے شیطان کے حوالے کردیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق مجمع تشخیص مصلحت نظام کے سکریٹری محسن رضائی  نے اینسٹا گرام میں اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ  سعودی عرب میں ایک نئی بت پرستی وجود میں آگئی ہے اور سعودی عرب کے حکام نے خود کو بڑے شیطان کے حوالے کردیا ہے۔

جناب محسن رضائی نے عید بعثت کی مناسبت سے تمام مسلمانوں کو مبارک باد پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ سرزمین وحی پر دوبارہ بت پرستی کا رواج ہوگيا ہے اور یہ بت پرستی بڑے شیطان امریکہ کی سرپرستی میں کی جارہی ہے جس کے نتیجے میں سعودی حکام امریکی بموں کے ذریعہ یمن کے بےگناہ بچوں اور عورتوں کو ان کے گھر میں دفن کررہے ہیں۔ ابو جہل اور ابو لہب نے ایک بار پھر خانہ خدا سے سربلند کیا ہے اور اس بار انھوں نے نئی بت پرستی کا آغاز کیا ہے لیکن عید بعثت یہ بشارت اورخوشخبری دے رہی ہے کہ ان بتوں کو توڑنے کا وقت قریب آگیا ہے۔

News Code 1863778

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • captcha