امریکہ کا یوکرائن کو طویل فاصلے تک مار کرنے والے راکٹ دینے کا فیصلہ

امریکہ نے یوکرائن کو طویل فاصلے تک مار کرنے والے راکٹ بھیجنے کا فیصلہ کیا ہے، جبکہ روس کا کہنا ہے کہ امریکہ یوکرائن کو ہتھیار فراہم کرکے جنگ کو طول دینے کی کوشش کررہا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی ایسوسی ایٹڈ پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکہ نے یوکرائن کو طویل فاصلے تک مار کرنے والے راکٹ بھیجنے کا فیصلہ کیا ہے، جبکہ روس کا کہنا ہے کہ امریکہ یوکرائن کو ہتھیار فراہم کرکے جنگ کو طول دینے کی کوشش کررہا ہے۔

اطلاعات کے مطابق امریکی صدر جوبائیڈن نے کہا ہے کہ یوکرائن کو میدان جنگ میں ہدف کو نشانہ بنانے کے لیے جدید راکٹ سسٹم اور آتشیں اسلحہ فراہم کریں گے ۔

وائٹ ہاؤس انتظامیہ کے ایک سینئر اہلکار کے مطابق طویل فاصلے تک مار کرنے والے M142 ہائی موبلٹی آرٹلری راکٹ سسٹم (HIMARS) یوکرائن بھیجیں گے جس کے لیے یوکرائن کے آرمی چیف نے ایک ماہ قبل درخواست کی تھی تاکہ روسی میزائل کا مقابلہ کرسکیں۔

تاہم سینیئر اہلکار نے اس بات کا بھی یقین دلایا کہ یہ جنگی اسلحہ صرف یوکرائن میں روسی حملوں کا مقابلہ کرنے کے لیے استعمال ہوگا اور یہ میزائل سے روس کی سرزمین میں کسی ہدف کو نشانہ بنانے کے لیے استعمال نہیں ہوں گے۔

یوکرین کے حکام کا کہنا ہے کہ طویل فاصلے تک مار کرنے والے میزائل سسٹمز سیکڑوں میل دور راکٹوں کے بیراج کو نشانہ بنانے کی صلاحیت رکھتے ہیں اور ان میزائل کے حصول سے جنگ کا منظر نامہ بدل جائے گا۔

واضح رہے کہ امریکہ کی جانب سے جدید راکٹس کی فراہمی یوکرائن کے لیے 700 ملین ڈالر کے نئے امدادی پیکج کا حصہ ہے۔ ادھر یورپی ممالک بھی یوکرائن کو وسیع پیمانے پر مدد فراہم کررہے ہیں۔

News Code 1911057

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • captcha