شہید قاسم سلیمانی کا مکتب عالمی اور جہانی ہے/ یورپی ممالک مستقل نہیں

ایرانی پارلیمنٹ کے رکن کا کہنا ہے کہ شہید قاسم سلیمانی کی شخصیت کا تعلق صرف ایران سے نہیں بلکہ شہید سلیمانی کا مکتب اور نظریہ عالمی اور جہانی ہے ۔

مہر خبررساں ایجنسی کے نامہ نگار کے ساتھ گفتگو میں ایرانی پارلیمنٹ کے رکن محسن کوہکن کا کہنا ہے کہ شہید قاسم سلیمانی کی شخصیت کا تعلق صرف ایران سے نہیں بلکہ شہید سلیمانی کا مکتب اور نظریہ عالمی اور جہانی ہے۔

انھوں نے کہا کہ شہید سلیمانی کے اندر انسانی، اخلاقی اور اسلامی خوبیوں کے ساتھ ساتھ شجاعت ، فداکاری، تدبیر اور اخلاص جیسی اہم خصوصیات بھی نمایاں تھیں ، سلیمانی کا مکتب وہی اسلام کا مکتب ہے۔ شہید سلیمانی نے ہمیشہ دینی اور اسلامی اقدار کا پاس و لحاظ کیا اور انھیں فروغ دینے میں بھی اہم کردار ادا کیا۔کوہکن نے مہر نیوز کے نامہ نگار سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ  شہید سلیمانی کا مکتب وہی اسلامی مکتب ہے ان کے طرفدار دنیا بھر میں موجود ہیں اور وہ سامراجی طاقتوں کی گھناؤنی سازشوں کو ناکام بنانے کے سلسلے میں اہم کردار ادا کریں گے۔

کوہکن نے مہر خبررساں ایجنسی کے نامہ نگار کے ساتھ گفتگو میں یورپی ممالک کی متضاد پالیسیوں کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ یورپی ممالک مستقل نہیں بلکہ وہ امریکہ کے زیر نظر ہیں  اور یہی وجہ ہے کہ رہبر معظم انقلاب اسلامی نے یورپی ممالک کی حکومتوں کو حقیر حکومتیں قراردیا ہے کیونکہ وہ مستقل نہیں ہیں۔

News Code 1897190

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 14 =