سعودی عرب کے سنگدل باپ نے 7 سالہ بیٹی کو ہلاک کردیا

سعودی عرب میں ایک سنگدل باپ نے اپنی سات سالہ بیٹی کو بے رحمی اور بے دردی سے قتل کردیا سعودی عرب کے اکثر شہری وہابیت اور جاہلیت کی رسم پر گامزن ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے برطانوی اخبار ڈیلی میل کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ سعودی عرب میں ایک سنگدل باپ نے اپنی سات سالہ بیٹی کو بے رحمی اور  بے دردی سے قتل کردیا سعودی عرب کے اکثر شہری وہابیت اور جاہلیت کی رسم پر گامزن ہیں۔اطلاعات کے مطابق 7 سالہ " یارہ" نے اپنے والد سے صرف اتنا کہا تھا کہ وہ اس سے محبت نہیں کرتی جس پر باپ طیش میں آگیا اور اپنی بیٹی کو ایئر کنڈیشنر کے ہوز پائپ سے تشدد کا نشانہ بنایا۔

ڈیلی میل مطابق یہ واقعہ سعودی دارالحکومت ریاض میں پیش آیا جہاں سنگدل باپ نے بیٹی کے جسم کو پائپ سے نشانہ بنانے کے بعد اسے اپنے بیڈ روم میں بند کرکے باہر سے کمرہ لاک کردیا۔ بعد ازاں " یارہ" کی حالت غیر ہونے پر اسے اسپتال لے گیا تاہم بچی نے راستے میں ہی دم توڑدیا۔

بچی کی ماں کا کہنا ہے کہ شوہر سے طلاق کے بعد طلاق کی شرائط کے تحت حال ہی میں اس کا شوہر زبردستی یارہ کو اپنے ساتھ رہنے کیلئے لے گیا تھا جبکہ بچی اس کے ساتھ جانا نہیں چاہتی تھی۔ اس کا کہنا تھا کہ بچی اپنے باپ کے ساتھ بالکل نہیں جانا چاہتی تھی اور وہ بہت زیادہ ناخوش تھی۔
 

News Code 1858885

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • captcha