فلسطینی تنظیم حماس نے نئے انتفاضہ کا اعلان کردیا

فلسطین کی تنظیم حماس کے رہنما اسماعیل ہانیہ نے مقبوضہ بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے سے متعلق امریکی صدر ٹرمپ کےاعلان کے خلاف نئے انتفاضہ کا اعلان کردیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے فلسطین الیوم کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ     فلسطین کی تنظیم حماس کے رہنما اسماعیل ہنیہ نے مقبوضہ بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے سے متعلق امریکی صدر ٹرمپ کےاعلان کے خلاف نئے انتفاضہ کا اعلان کردیا ہے۔  اطلاعات کے مطابق غزہ میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے حماس کے رہنما اسماعیل ہنیہ نے اسرائیل کے خلاف انتفاضہ کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہمیں انتفاضہ کےلئے کام کرنا چاہئے، ہم حق خودارادیت کےلئے جدوجہد کرتے رہیں گے جبکہ کل یوم جمعہ کو امریکی فیصلے اور اسرائیل کے خلاف احتجاج اور ریلیاں نکالی جائیں گی۔ اسماعیل ہنیہ کا کہنا تھا کہ مقبوضہ بیت المقدس ریاست فلسطین کا دارالحکومت ہے اور رہے گا ، انھوں نے حماس کے تمام اراکین اور عہدیداروں کو ہدایت کی ہے کہ مقبوضہ بیت المقدس اور فلسطین کو لاحق خطرے سے نمٹنے کےلئے کارکن اور عہدیدار نئے تنظیمی احکامات کے لئے مکمل طور پر تیار رہیں۔ اسماعیل ہنیہ نے فلسطین کے صدر محمود عباس سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ اسرائیل کے ساتھ امن عمل معطل کرنے کے ساتھ ساتھ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور انتظامیہ کا بھی بائیکاٹ کردیں۔

News Code 1877193

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 7 + 4 =