مسجد الاقصی انتفاضہ پورے فلسطین میں پھیل گیا ہے

فلسطینی تنظیم حماس کے سیاسی شعبہ کے نائب سربراہ نے اپنے خطاب میں تمام فلسطینی گروہوں کے اتحاد پر تاکید کرتے ہوئے کہا ہے کہ مسجد الاقصی انتفاضہ پورے فلسطین میں پھیل گیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے سما کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ فلسطینی تنظیم حماس کے سیاسی شعبہ کے نائب سربراہ اسماعیل ہنیہ نے اپنے خطاب میں تمام فلسطینی گروہوں کے اتحاد پر تاکید کرتے ہوئے کہا ہے کہ مسجد الاقصی انتفاضہ پورے فلسطین میں پھیل گیا ہے۔ اسمایل ہنیہ نے کہا کہ غزہ نے تمام مشکلات کے باوجود اسرائیل کے ساتھ تین جنگیں لڑی ہیں اور محاصرے کے باوجود اسرائیلی بربریت اور جارحیت کے سامنے استقامت کا مظاہرہ کررہا ہے۔ اسماعیل ہنیہ نے کہا کہ فلسطینی اپنے حقوق سے ہر گز پیچھے نہیں ہٹیں گے اور ہم اپنی سرزمین اسرائیل کے قبضہ سے چھڑا کر دم لیں گے۔

باخبر ذرائع کے مطابق فلسطین اور بیت المقدس کی آزادی میں سعودی عرب اور امریکہ سب سے بڑی رکاوٹ ہیں اور اس کے ساتھ وہابی فکر بھی فلسطین کے خلاف اور اسرائیل کے ہمنوا ہے کیونکہ وہابیوں نے اسرائیل کے بجائے شام اور عراق کو اپنی دہشت گردانہ کارروائیوں کا نشانہ بنا رکھا ہے اور وہ مسلمانوں کی توجہ مسئلہ فلسطین سے ہٹانے میں ایک حد تک کامیاب ہوگئے ہیں۔ یہودی اور وہابی دونوں ایک ہی ہیں اور دونوں اسلام اور مسلمانوں کے لئے عظیم خطرہ ہیں۔

News Code 1858801

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 6 =