پاکستان کے صوبہ سندھ میں 115 عزاداروں پر مقدمہ، رانی پور پریس کلب کے باہر بھوک ہڑتال

احتجاج سے خطاب میں شیعہ رہنماؤں نے کہا کہ ہم ساٹھ برس سے گاؤں وڈا بھیلار میں عزاداری کرتے ہیں لیکن اس برس ایس ایچ او رانی پور نے ماتمی جلوس کو پولیس سیکیورٹی دینے کے باوجود پولیس تھانہ رانی پور پر سرکاری مدعیت میں مقدمہ درج کیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے پاکستانی میڈیا سے نقل کیاہےکہ پاکستان کے صوبہ سندھ کے شہر رانی پور میں محرم الحرام کے عشرہ اول کے بعد عزاداروں کے خلاف مقدمات قائم کرنے پر پریس کلب رانی پور کے صحن میں بھوک ہڑتال کیمپ قائم کردیا گیا۔ قبل ازیں عزاداروں کی جانب سے رانی پور پریس کلب پر احتجاج کیا گیا، جس سے خطاب میں شیعہ رہنماؤں نے کہا کہ ہمیں عزاداری امام حسین علیہ السلام کرنے کی سزا دی جا رہی ہے، ہم ساٹھ برس سے گاؤں وڈا بھیلار میں عزاداری کرتے ہیں لیکن اس برس ایس ایچ او رانی پور نے ماتمی جلوس کو پولیس سیکیورٹی دینے کے باوجود پولیس تھانہ رانی پور پر سرکاری مدعیت میں مقدمہ درج کیا ہے۔ رہنماؤں کے مطابق مقدمہ میں ایک سو پندرہ عزاداروں کو نامزد کیا گیا ہے، غیرمعینہ مدت تک پریس کلب رانی پور کے صحن میں بھوک ہڑتال کیمپ قائم کررہے ہیں۔ بھوک ہڑتالی کیمپ پر مختلف شیعہ تنظیموں کے رہنماؤں، کارکنان اور عزادار حسین علیہ السلام کی آمد جاری ہے۔

News Code 1911978

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • captcha