امریکہ کا خطے میں اصلی ہدف اسرائیل کی حفاظت اور فلسطینیوں کے حقوق کو پامال کرنا ہے

حزب اللہ لبنان کے نائب سربراہ شیخ نعیم قاسم نے خطے میں امریکہ کی ریشہ دوانیوں کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکہ کا خطے میں اصلی ہدف اسرائیل کی حفاظت اور فلسطینیوں کے حقوق کو پامال کرنا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق حزب اللہ لبنان کے نائب سربراہ شیخ نعیم قاسم نے ٹی وی کے ساتھ گفتگو میں  خطے میں امریکہ کی ریشہ دوانیوں کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکہ کا خطے میں اصلی ہدف اسرائیل کی حفاظت اور فلسطینیوں کے حقوق کو پامال کرنا ہے۔

انھوں نے کہا کہ حزب اللہ ایک مزاحمتی تحریک ہے جس نے اسرائیل کو لبنان سے خارج کردیا اور اسرائیل کے تمام شوم منصوبوں کو ناکام بنادیا، حزب اللہ لبنان کو سن 2000 میں اسرائیل کے خلاف بڑی فتح اور کامیابی نصیب ہوئی۔

شیخ نعیم قاسم نے کہا کہ لبنان میں امریکہ اور ایران کے درمیان موجود اختلاف مشکل نہیں بلکہ حزب اللہ اور اسرائیل کے درمیان مشکل ہے لبنانی مزاحمت تین بنیادوں پر استوار ہے جن میں لبنانی فوج، لبنانی عوام اور لبنانی مزاحمت شامل ہیں۔ حزب اللہ لبنان کا ایک حصہ ہے جس نے لبنان میں حاکمیت کو برقرار رکھا ہوا ہے اور یہ مسئلہ امریکہ اور اسرائیل کے لئے قابل قبول نہیں ہے۔ لبنان کی موجودہ حکومت باقی رہے گی ۔ حزب اللہ لبنان کی حکومت کا حصہ ہے اور حزب اللہ کا اصلی ہدف اسرائیل کی توسیع پسندانہ پالیسیوں کو روکنا ہے۔

News Code 1901510

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 8 + 3 =