سعودی عرب ایران کے صبر کا امتحان لینے کی کوشش نہ کرے

ایران کے نائب وزیر خارجہ حسین امیرعبداللھیان نے سعودی عرب کے وزیر خارجہ کو سخت متنبہ کرتے ہوئے کہا کہ وہ ایران کے صبر کا امتحان لینے کی کوشش نہ کریں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ ایران کے نائب وزیر خارجہ حسین امیرعبداللھیان نے سعودی عرب کے وزیر خارجہ کو سخت متنبہ کرتے ہوئے کہا کہ وہ ایران کے صبر کا امتحان لینے کی کوشش نہ کریں۔ ایران کے نائب وزیر خارجہ نے بحرین اور سعودی عرب میں اسلحہ اسمگل کرنے کے سعودی وزیر خارجہ کے الزامات کو بے بنیاد قرار دیتے ہوئے، سختی کے ساتھ مسترد کردیا۔ انہوں نے کہا کہ سعودی عرب بے بنیاد الزامات کے ذریعے ایران کو نہ آزمائے۔ ایران کے نائب وزیر خارجہ حسین امیرعداللہیان نے کہا کہ سعودی حکومت خود یمن، عراق اور شام میں دہشت گردوں کی کھلی اور پوشیدہ حمایت کررہی ہے اور اس کو اس کا سلسلہ بند کردیناچاہئے۔ انھوں نے کہا کہ سعودی حکومت کو اسی طرح بحرین جیسے چھوٹے سے ملک کو اپنی غلط پالیسیوں کا اکھاڑا نہیں بنانا چاہئے۔ ایران کے وزیر خارجہ نے واضح الفاظ میں کہا کہ" میں سعودی وزیر خارجہ عادل الجبیر کو متنبہ کرتا ہوں کہ وہ اسلامی جمہوریہ ایران کے صبر کا امتحان نہ لیں۔" ایران کے نائب وزیر خارجہ نے کہا کہ سعودی وزیر خارجہ الزام تراشی کے بجائے سانحہ منی پر توجہ دیں۔ حسین امیر عبداللھیان نے مزید کہا کہ تہران نے سعودی عرب کے ساتھ اپنے معمول کے تعلقات بحال رکھنے کی کبھی مخالفت نہیں کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ بال اب سعودی عرب کے کورٹ میں ہے، ہمیں نہیں معلوم کہ سعودی عرب میں کون لوگ فیصلے کرتے ہیں۔

News Code 1859284

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • captcha