ہم امریکہ کے سامنے سر تسلیم خم نہیں کریں گے/ سازشی عناصر روبزوال

حزب اللہ لبنان کے سربراہ سید حسن نصر اللہ نے شہید مصطفی بدرالدین کی شہادت کی سالگرہ کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ شہید بدرالدین شجاع، بہادر اور دلیر انسان تھے۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق حزب اللہ لبنان کے سربراہ سید حسن نصر اللہ نے شہید مصطفی بدرالدین کی شہادت کی سالگرہ کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ شہید بدرالدین شجاع، بہادر اور دلیر انسان تھے۔

سید حسن نصر اللہ نے شہید بدارالدین کی خصوصیات بیان کرتے ہوئے کہا کہ شہید بدرالدین قوی، مضبوط، دلاور، شجاع اور بہادر انسان تھے اور اس کے ساتھ ساتھ وہ ایک بہترین شاعر بھی تھے انھوں نے فلسطین ، بیت المقدس اور آئمہ اطہار (ع) کے بارے میں بہترین اشعار کہے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ شہید بدرالدین میں ایک مجاہد کی تمام خصوصیات موجود تھیں اور اس شہید والا مقام نے اپنی تمام عمر صہیونیوں کے خلاف تلاش وکوشش اور جہاد میں صرف کی۔

سید حسن نصر اللہ نے یوم النکبہ کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ یوم النکبہ صرف فلسطینیوں کے لئے نہیں بلکہ اس میں تمام عرب شریک ہیں۔

انھوں نے کہا کہ فلسطینی عوام استقامت اور مجاہدت کے راستے پر گامزن ہے اور گذشتہ ہفتہ کے واقعات سے ثابت ہوگيا ہے کہ فلسطینی عوام بیدار ہیں اور وہ عرب حکمرانوں کی سازش میں نہیں آئیں گے کیونکہ انھیں معلوم ہے کہ عرب حکمراں امریکہ اور اسرائیل کے مزدور اور آلہ کار ہیں۔  انھوں نے کہا کہ عرب حکمرانوں نے کبھی بھی فلسطینیوں کی عملی حمایت نہیں کی۔ بلکہ انھوں نے فلسطین کے مسئلہ میں ہمیشہ امریکہ اور اسرائیل کا ساتھ دیا ہے۔ فلسطین پر اسرائیل کا غاصبانہ قبضہ در حقیقت عرب ممالک کی شکست کا مظہر ہے۔

حزب اللہ کے سربراہ نے کہا کہ شہید بدرالدین کی نسل  نے ہمیں سن 2000 کی جنگ میں فتح سے ہمکنار کیا۔ لبنان کی آزادی ، استقلال اور کامیابی در حقیقت  شہداء کے خون کی مرہون منت ہے۔

سید حسن نصر اللہ نے کہا کہ ہم عملی طور پر فلسطینیوں کے ساتھ ہیں اور ہم امریکہ و اسرائیل کے ناپاک اور مذموم عزائم کے سامنے سر تسلیم خم نہیں کریں گے۔ لبنان کو اس وقت قدرت اور ہتھیاروں کے بحران کا سامنا نہیں بلکہ لبنان کو اس وقت معاشی بحران کا سامنا ہے اور معاشی بحران کے پیچھے امریکہ کا ہاتھ ہے اور ہمیں امریکہ کے ناپاک عزائم کا ہر محاذ پر ڈٹ کر مقابلہ کرنا چاہیے۔

News Code 1910919

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • captcha