روسی فوج کی پولینڈ کی سرحد پر یوکرائن کے سب سےبڑے فوجی اڈے پر شدید بمباری

روسی فوج نے پولینڈ کی سرحد پر یوکرائن کے سب سے بڑے فوجی اڈے پر 30 میزائل داغے ہیں، جس کے نتیجے میں 35 اہلکار ہلاک اور 134 زخمی ہوگئے ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے رائٹرز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ  روسی فوج نے پولینڈ کی سرحد پر یوکرائن کے سب سے بڑے فوجی اڈے پر 30 میزائل داغے ہیں،  جس کے نتیجے میں 35 اہلکار ہلاک اور 134 زخمی ہوگئے ہیں۔

اطلاعات کے مطابق پولینڈ سے محض 25 کلومیٹر دوری پر واقع یوکرائن کے شہر يافوريف میں ملک کے سب سے بڑے فوجی اڈے پر روسی طیاروں نے حملہ کیا ہے

واضح  رہے کہ 140 مربع میل پر محیط اس فوجی اڈے میں یوکرائنی اہلکاروں کو تربیت دینے کے لیے نیٹو کے ٹرینر بھی موجود رہے ہیں۔ يافوريف کے گورنر میکسم کوزیٹسکی نے میڈیا کو بتایا کہ روسی طیاروں نے ’’یاوریو انٹرنیشنل سینٹر فار پیس کیپنگ اینڈ سیکیورٹی‘‘ پر 30 راکٹ داغے جن میں سے کچھ کو فضا میں ہی تباہ کردیا گیا تاہم زیادہ تر فوجی اڈے میں گرے۔

گورنر میکسم کوزیٹسکی کے مطابق روسی فوج کے حملے میں 35 اہلکار ہلاک اور 134 زخمی ہوئے تاہم انھوں نے یہ واضح نہیں کیا کہ ہلاک اور زخمی ہونے والوں میں کوئی غیرملکی یا نیٹو اہلکار بھی شامل ہے۔

واضح رہے کہ روس کا یہ پہلا حملہ ہے جو یوکریئن کے مغربی علاقے اور یورپی یونین کے رکن ملک پولینڈ کے قریب کیا گیا ہے ۔

News Code 1910145

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 7 + 2 =