عمران خان کا وزیر اعظم نواز شریف سے استعفی کا مطالبہ

پاکستان کی سیاسی جماعت تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان نے پاکستانی وزیراعظم نواز شریف سے استعفی کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ ملکی تاریخ میں فیصلہ کن مرحلہ آگیا اور اس وقت جدوجہد نہ کی تو ملک تباہ ہوجائے گا۔

مہر خبررسان ایجنسی نے ڈان کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان کی سیاسی جماعت تحریک انصاف  کے سربراہ عمران خان نے پاکستانی وزیراعظم نواز شریف سے استعفی کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ ملکی تاریخ میں فیصلہ کن مرحلہ آگیا اور اس وقت جدوجہد نہ کی تو ملک تباہ ہوجائے گا۔ اسلام آباد میں اپنی رہائشگاہ پر خطاب کرتے ہوئے عمران خان کا کہنا تھا کہ پاناما لیکس کسی پاکستانی نے لیک نہیں کیا بلکہ اللہ کے کرم سے قوم کو ملک کا رخ بدلنے کا موقع مل گیا، ملکی تاریخ میں فیصلہ کن مرحلہ آگیا، ظلم اور ناانصافی کے خلاف کھڑا ہونا بھی جہاد ہے،اگر اس وقت جدوجہد نہ کی تو ملک تباہ ہوجائے گا۔ انہوں نے کہا کہ پانامہ لیکس کے بعد وزیراعظم نواز شریف نے قوم سے خطاب کرکے مظلوم بننے کی کوشش کی انہوں نے قوم کو حقائق بیان کرنے کے بجائے غلط بیانی کی اس لئے پانامہ لیکس کے معاملے پرریٹائرڈ جج کی سربراہی میں کمیشن کوئی نہیں مانے گا اس لئے موجودہ چیف جسٹس کی سربراہی میں کمیشن بنایا جائے۔عمران خان نے کہا کہ پانامہ لیکس پاکستان تحریک انصاف کی سازش نہیں، پانامہ پیپرزمیں پاکستانی وزیراعظم کے بیٹوں کی کمپنیاں نکل آئی ہیں، سچ اور حق پر قومیں کھڑی نہیں ہوتیں تو تباہی کی طرف چلی جاتی ہیں، پاکستانیوں کو اس ملک کا رُخ موڑنے کا موقع مل گیا ہے، کئی ممالک میں پانامہ پیپرزکے بعد احتجاج شروع ہوگیا ہے،عوام خاموش ہیں اسی لیے ملک تباہی کی طرف جارہا ہے ۔عمران خان کا کہنا تھا کہ پانامہ لیکس کے بعد آئس لینڈ کےعوام سڑکوں پرآئے اور وزیراعظم کواستعفیٰ دینا پڑا، عمران خان نے کہا کہ برطانوی وزیراعظم ڈیوڈ کیمرون پرایک اور وزیراعظم نوازشریف پر5 الزامات ہیں جب کہ ڈیوڈ کیمرون نے اپنے والد کی کمپنی کے شیئرز وزیراعظم بننے سے پہلے فروخت کردیئے تھے اور ان پر الزام یہ ہے کہ انہوں نے کم ٹیکس ادا کیا اور اب ان کے اقتدار میں رہنے پر سوالات اٹھ رہے ہیں جب کہ وزیراعظم نواز شریف پر ٹیکس بچانا، منی لانڈرنگ اور کرپشن جیسےالزامات ہیں، وزیراعظم نے الیکشن کمیشن کو اپنی کمپنیوں کا نہیں بتایا اور اثاثے بھی ڈکلیئر نہیں کیے اس لئے اب ان کا مزید اقتدار میں رہنے کا اخلاقی جواز ختم ہوگیا ہے۔ عمران خان نے وزیراعظم سے مستعفی ہونے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ ہزاروں میں ٹیکس ادا کرکے اربوں روپے کی جائیداد کیسے بنا دی گئی، حکمرانوں کے اپنے پیسے باہر ہیں تو عوام سے ٹیکس کا مطالبہ کس منہ سے رکھتے ہیں ۔

News Code 1863212

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 8 + 9 =