اردن کی پارلیمنٹ کے نمائندے کا بیٹا داعشی نکلا

اردن کی پارلیمنٹ کے نمائندے کے بیٹے نے داعش دہشت گردوں میں شامل ہوکر عراق میں ایک خود کش حملہ کیا جس میں وہ ہلاک ہوگیا۔

مہرخبررساں ایجنسی نے المسلہ کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ اردن کی پارلیمنٹ کے نمائندے کے بیٹے نے داعش دہشت گردوں میں شامل ہوکر عراق میں ایک خود کش حملہ میں حصہ لیا جس کے نتیجے میں وہ ہلاک ہوگیا۔ داعش دہشت گردوں نے اپنی سائٹ پر اعلان کیا ہے کہ 23 سالہ  " محمد الضلاعین " " المعروف " ابوالبراء الاردنی" عراق میں اپنے تین ساتھیوں سمیت ہلاک ہوگیا ہے۔الضلاعین  یوکرائن میں پڑھ رہا تھا اور وہ  جون میں  پڑھائی چھوڑ کر ترکی کے راستے شام میں داعش میں شامل ہوگیا ۔

News Code 1858587

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 1 =