امریکی ایئرلائنز مفلوج، 1230 پروازیں تاخیر کا شکار

امریکی میڈیا نے ملک کی تمام پروازوں کے تاخیر اور سینکڑوں پروازوں کی منسوخی کی خبر دی ہے، حکام نے اس کی وجہ کو "تکنیکی خرابی" قرار دیا ہے۔

مہر خبر رساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، عالمی خبر رساں ادارے نے خبر دی ہے کہ امریکی فیڈرل ایوی ایشن نے ٹویٹر پر اس خبر کا اعلان کیا۔ بیان میں کہا گیا کہ امریکہ بھر میں تمام پروازیں "تکنیکی خرابی" کے باعث تاخیر کا شکار ہوئی ہیں کیونکہ فیڈرل ایوی ایشن سسٹم نے اچانک کام کرنا بند کردیا جس کے باعث ملک بھر کی پروازیں بند ہوگئیں۔

امریکی فیڈرل ایوی ایشن ایڈمنسٹریشن نے تمام ایئر لائنز کو ہدایت کی ہے کہ ڈومیسٹک پروازوں کو کل صبح 9 بجے تک مؤخر کر دیں تاکہ پروازوں اور ان کی حفاظتی معلومات کی سالمیت کی توثیق کی جاسکے۔فیڈرل ایوی ایشن ایڈمنسٹریشن کی جانب سے جاری بیان میں یہ نہیں بتایا کہ خرابی کس نوعیت کی ہے تاہم ترجمان کا کہنا ہے کہ سسٹم کی خرابی کو درست کرنے کے لیے ہنگامی بنیادوں پر کام شروع کردیا ہے۔

ترجمان ایوی ایشن کا مزید کہنا تھا کہ وہ ایک ایسے نظام کو بحال کرنے کے لیے کام کر رہے ہیں جو پائلٹوں کو خطرات سمیت ہوائی اڈے کی سہولیات اور طریقہ کار میں تبدیلیوں سے آگاہ کرتا ہے۔

سی این این کے مطابق، فضائی ٹریفک کی نگرانی کرنے والی ویب سائٹس پر نیویگیشن ڈیٹا سے پتہ چلتا ہے کہ تاخیر کا شکار ہونے والی امریکہ کی مقامی اور بین الاقوامی پروازوں کی کل تعداد 1,230 تک پہنچ گئی ہے جبکہ امریکہ کے اندر اور باہر منسوخ ہونے والی پروازوں کی کل تعداد 103 تک پہنچ گئی ہے۔

News Code 1914131

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • captcha