فلسطینی تنظیم حماس کے رہنما کا ایران کی طرف سے مالی اور عسکری وسائل کی حمایت پر شکریہ

فلسطینی تنظیم حماس کے سیاسی دفتر کے سربراہ یحیی السنوار نے اسلامی جمہوریہ ایران کی طرف سے فلسطینیوں کی مالی اور عسکری وسائل کے ذریعہ حمایت کرنے پر شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا ہے کہ اسرائيل کو غنڈہ گردی اور عربدہ کشی کی اجازت نہیں دی جائےگی۔

مہر خبررساں ایجنسی نے المیادین کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ فلسطینی تنظیم حماس کے سیاسی دفتر کے سربراہ یحیی السنوار نے اسلامی جمہوریہ ایران کی طرف سے فلسطینیوں کی مالی اور عسکری وسائل کے ذریعہ حمایت کرنے پر شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا ہے کہ اسرائيل کو غنڈہ گردی اور عربدہ کشی کی اجازت نہیں دی جائےگی۔ فلسطینی رہنما یحیی السنوار نے بیت المقدس اور مسجد الاقصی کے فلسطینی مدافعین ، مغربی پٹی کے فلسطینیوں اور مقبوضہ فلسطین میں ساکن فلسطینیوں کو مسجد الاقصی کی حمایت می سڑکوں پر نکلنے کے سلسلے میںم بارکباد پیش کرتے ہوئے کہا کہ تمام فلسطینیوں کو سلام پیش کرتا ہوں۔ فلسطینیوں نے مجودہ شرائط میں شاندار اتحاد اور یکجہتی کام ظاہرہ کیا اور ہم باہمی اتحاد اور یکجہتی کے ساتھ بہت جلد نہائی فتح سے ہمکنار ہوجائیں گے۔

حماس کے رہنما نے کہا کہ غزہ کی 12 روزہ جنگ کے دوران 100 سے 200 کلو میٹر کے سیکڑوں میزائل ہر منٹ میں اسرائیل کی طرف فائر کئے گئے اور جنگ کے آخری دن امکان تھا کہ 300 میزائل اسرائیل کی طرف فائر کئے جائیں۔

یحیی السنوار نے غزہ جنگ میں ایران کی بے لوث حمایت کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران کا ہم تہہ دل سے شکریہ ادا کرتے ہیں جس نے ہمیں مشکل وقت میں مالی اور عسکری وسائل فراہم کئے۔ حماس کو غزہ کی تعمیر کے سلسلے میں کسید وسرے ملک کیم دد کی ضرورت نہیں۔ حماس کے رہنما نے حزب اللہ لبنان کا بھی شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ غزہ جنگ میں ہمارے لبنانی بھائی ہمارے ساتھ رہے ہیں۔ حماس اور حزب اللہ لبنان کے درمیان شاندار تعاون رہا ہے۔

News Code 1906682

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 0 =