امریکی خفیہ ایجنسی نے شہید قاسم سلیمانی پر امریکی صدر کے الزامات کو رد کردیا

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی طرف سے ایران کی سپاہ قدس کے مجاہد عظیم شہید میجر جنرل قاسم سلیمانی پر دہشت گردی اور امریکی سفارتخانوں پر حملوں کی منصوبہ بندی کے الزامات کو امریکی خفیہ ایجنسی نے مسترد کردیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے واشنگٹن پوسٹ کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی طرف سے ایران کی سپاہ قدس کے مجاہد عظیم شہید میجر جنرل قاسم سلیمانی پر دہشت گردی اور امریکی سفارتخانوں پر حملوں کی منصوبہ بندی کے الزامات کو امریکی خفیہ ایجنسی نے مسترد کردیا ہے۔

اطلاعات کے مطابق امریکہ کی خفیہ ایجنسی نے صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے امریکی حملے میں شہید  ہونے والے ایران کی القدس فورس کے کمانڈر شہید میجرجنرل قاسم سلیمانی پر لگائے گئے الزامات مسترد کر دیئے ہیں۔ ذرائع کے مطابق 3 جنوری کو امریکہ نے بغداد میں میزائل حملہ کرکے القدس فورس کے کمانڈر میجرجنرل قاسم سلیمانی کو ساتھیوں سمیت  شہید کر دیا تھا۔امریکی صدر نے اپنی نیوز کانفرنس میں قاسم سلیمانی کو دنیا کا دہشت گرد قرار دیتے ہوئے کہا تھا کہ قاسم سلیمانی کی دہشت کا راج اب ختم ہو چکا، امریکی افواج نے ایک درست کارروائی میں انہیں شہید کیا۔ ٹرمپ نے الزام لگایا تھا کہ قاسم سلیمانی امریکی سفارت کاروں اور فوجی شخصیات پر حملے کی منصوبہ بندی کر رہے تھے لیکن ہم نے اسے شہید کردیا۔تاہم ڈونلڈ ٹرمپ کے اس دعوے کو امریکہ کی خفیہ ایجنسی کے اہلکاروں نے مسترد کر دیا ہے۔واشنگٹن پوسٹ کے مطابق ٹرمپ انتظامیہ کے ایک اہلکار اور انٹیلی جنس کمیونٹی کے اہلکاروں کا کہنا ہے کہ انہیں ایسا علم نہیں کہ بغداد ائیرپورٹ پر حملے میں مارے گئے جنرل سلیمانی امریکہ کے چار سفارتخانوں پر حملوں کی سازش کر رہے تھے۔اہلکاروں نے امریکی اخبار کو بتایا کہ صرف بغداد میں امریکی سفارتخانے کے خلاف سازش کا علم تھا لیکن اس میں بھی شہید قاسم سلیمانی کی سازش واضح نہیں ہے۔ ذرائع کے مطابق امریکہ کی طرف سے شہید قاسم سلیمانی کی مظلومانہ شہادت پر دنیا بھر میں امریکہ کے خلاف نفرت میں اضافہ ہوگیاہے جبکہ شہید قاسم سلیمانی کی مظلومانہ شہادت پر عراق اورایران  سمیت دنیا کے مختلف ممالک میں کئی ملین افراد نے سوگ منایا ۔ قاسم سلیمانی کی شہادت کے بعد امریکہ دنیا میں مزید رسوا ہوگیا اور ایران نے بھی جوابی کارروائی میں امریکہ پر سخت طمانچہ رسید کرتے ہوئے عین الاسد میں میزائل حملے میں 80 امریکی فوجیوں کو ہلاک اور 230 کو زخمی کردیا اور خطے سے امریکی فوج کے  انخلا کے سلسلے میں اسے پہلا قدم قراردیا ہے۔

News Code 1896994

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 5 + 13 =