طالبان کے ساتھ  دو ہفتے تک کابل میں داخل نہ ہونے کا معاہدہ تھا

امریکی مذاکرات کار زلمے خلیل زاد نے فاش کیا ہے کہ طالبان کے ساتھ معاہدہ تھا کہ دو ہفتے تک کابل میں داخل نہیں ہوں گے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے جنگ کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکی مذاکرات کار زلمے خلیل زاد نے  فاش کیا ہے  کہ طالبان کے ساتھ معاہدہ تھا کہ دو ہفتے تک کابل میں داخل نہیں ہوں گے۔ زلمے خلیل زاد کا کہنا ہے کہ اس معاہدے کے دوران اقتدار کی منتقلی عمل میں آنی تھی، لیکن اشرف غنی کے اچانک جانے سے طالبان کے ساتھ معاہدہ ٹوٹ گیا۔ انہوں نے کہا کہ اجلاس میں طالبان نے کہا کہ کیا امریکی فوج کابل کی سکیورٹی یقینی بنائے گی۔ جس پر امریکہ کا جواب تھا کہ ہم نے سکیورٹی کی ذمہ داری نہیں لی۔ واضح رہے کہ امریکہ نے افغانستان پر 20 سال تک قبضہ کرنے کے بعد آخر کار افغانستان کو امریکی ہتھیاروں سمیت طالبان کے حوالے کردیا ہے۔

News Code 1908172

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 7 + 9 =