نریندر مودی گائے کے بجائے خواتین کے مسائل پر توجہ دیں

ناگالینڈ کی حسینیہ مس کوہیما نے نریندر مودی کے ساتھ ملاقات کی کے دعوت کے سوال کا جاوب دیتے ہوئے کہا کہ اگر ان کی ملاقات وزیر اعظم نریندر مودی سے ہوئی تو وہ ان کی توجہ گائے کے بجائے خواتین کے امور پر دلانے کی کوشش کریں گی۔

مہر خبررساں ایجنسی نے بھارتی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ ناگالینڈ کی حسینیہ مس کوہیما نے  نریندر مودی کے ساتھ ملاقات کی کے دعوت کے سوال کا جاوب دیتے ہوئے کہا کہ اگر ان کی ملاقات وزیر اعظم نریندر مودی سے ہوئی تو وہ ان کی توجہ گائے کے بجائے خواتین کے امور پر دلانے کی کوشش کریں گی۔

رواں ماہ 5اکتوبر کو ناگالینڈ کے دارالحکومت میں مس کوہیما 2019مقابلے کا انعقاد کیا گیا، جس میں23 سالہ کرینو مزیٹسو کو فتح کا تاج پہنایا گیا، 19 سالہ کریلی وینو سوہو پہلی رنر اپ بنیں جبکہ 18 سالہ ’وکونوسچو‘ دوسری رنر اپ رہیں۔ مس کوہیما مقابلے میں ججز کی جانب سے سوال و جواب راؤنڈ کیا گیا جس میں اُنہوں نے اُمیدواروں سے مختلف سوالات کیے، اِسی دوران ایک جج نے ویکونو سچو سے سوال کیا کہ ’اگر آپ کو بھارتی وزیراعظم نریندر مودی سے بات کرنے کے لیے دعوت دی گئی تو آپ اُن سے کیا کہیں گی؟‘

اس سوال کے جواب میں ویکونو سچو نے جواب دیا کہ ’ اگر مجھے بھارتی وزیراعظم نریندر مودی سے بات چیت کرنے کی دعوت دی گئی تو میں اُن سے کہوں گی کہ آپ گائے کے بجائے مُلک کی خواتین پر زیادہ توجہ دیں۔‘

ویکونوسچو کے اِس جواب پر حاضرین و میزبان سمیت ججز اور اُمیدواروں نے قہقہے لگا دیے۔ویکونو سچو کے اِس جواب کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی ہے۔

News Code 1894724

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 8 + 5 =