بھارتی فوج کشمیریوں کو ڈرا دھمکا کر ذرائع ابلاغ سے بات کرنے سے روک رہی ہے

بھارتی جریدہ فرنٹ لائن نے اپنی رپورٹ میں انکشاف کر تے ہوئے کہاہے کہ بھارتی فوج کشمیریوں کو ڈرا دھمکا کر میڈیا سے بات کرنے سے روک رہی ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق بھارت کے معروف میڈیا گروپ " دا ہندو"  کے جریدے فرنٹ لائن نے کشمیر میں مودی سرکار کے مظالم کی تصدیق کرتے ہوئے اپنی رپورٹ میں کہا ہے کہ کشمیرمیں بھارتی فوج کےپُرتشددواقعات کی تعداد بہت زیادہ ہے، غیر ملکی میڈیا پر تو ان میں سے چند ہی واقعات سامنے آسکے ہیں، بھارتی فورسزکشمیر میں بدترین تشدد کو بطورہتھیاراستعمال کر رہی ہیں اور کشمیریوں کو صحافیوں سے بات کرنے سے روکنے کیلیے ڈرایا دھمکایا جاتا ہے۔

فرنٹ لائن نے لکھا کہ بھارتی فورسزنظر رکھتی ہیں کہ کوئی صحافی یا میڈیا کہاں کس گھر میں جا رہا ہے، لوگ اتنے خوفزدہ ہیں کہ اپنے ساتھ ہونیوالی زیادتیوں پرمنہ بند رکھنےکے لیےمجبورہیں، شناخت نہ بتانے کی شرط پربھی لوگ بھارتی فورسز کےمظالم پر میڈیا سے بات کوتیارنہیں ہوتے۔بھارتی جریدہ نے اپنی رپورٹ میں کہا کہ لوگوں کودھمکایاجاتاہےکہ وہ چھاپوں،تشدد اوربچوں کی گرفتاریوں کا میڈیاکونہ بتائیں، میڈیا پر خبرآجانے پربھارتی فورسز گھروں میں جاکرسنگین نتائج کی دھمکیاں دیتی ہے۔

News Code 1894676

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 8 + 10 =