سیاسی رہنماؤں کو پلوامہ حملے کے بعد بڑھنے والی کشیدگی کو کم کرنا چاہیے، محبوبہ مفتی

بھارت کے زیر انتظام کشمیر کی سابق وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی نے کہا ہے کہ کمشیر میں سیاسی رہنماؤں کو پلوامہ میں پیراملٹری قافلے پر خود کش حملے کے بعد بڑھنے والی کشیدگی کو کم کرنا چاہیے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے بھارتی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ بھارت کے زیر انتظام کشمیر کی سابق وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی نے کہا ہے کہ کمشیر میں سیاسی رہنماؤں کو پلوامہ میں پیراملٹری قافلے پر خود کش حملے کے بعد بڑھنے والی کشیدگی کو کم کرنا چاہیے۔ ان کا کہنا تھا کہ بھارتی حکمرانی کے خلاف مظاہرہ کرنے والے کشمیریوں پر جاری کریک ڈاؤن لوگوں کو بھارت سے مزید دور کرسکتا ہے۔ محبوبہ مفتی کا کہنا تھا کہ میں واضح طور پر یہ سمجھتی ہوں کہ پاکستان کے ساتھ اندرونی اور بیرونی مذاکراتی عمل ہونا چاہیے، اگر اب زمینی حقائق کی روشنی میں کسی قسم کے سیاسی عمل کا آغاز نہیں کیا گیا تو صورتحال بدتر ہوجائیں گے۔

News Code 1888779

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 6 + 7 =