دہلی کے وزیراعلیٰ کو ایک شخص نے تھپڑ جڑ دیا

بھارت کے دارالحکومت دہلی میں جلوس کے دوران ایک شخص نے دہلی کے وزیراعلیٰ اروند کجروال کے منہ پر زوردار تھپڑ رسید کردیا۔

مہر خبررساں ایجنسی نے بھارتی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ بھارت کے دارالحکومت  دہلی میں جلوس کے دوران ایک شخص نے دہلی کے وزیراعلیٰ اروند کجروال کے منہ پر زوردار تھپڑ رسید کردیا۔ اطلاعات کے مطابق عام آدمی پارٹی کے سربراہ اور دہلی کے وزیراعلیٰ  موتی نگر میں برجیش گویل کی انتخابی مہم کے سلسلے میں ایک جلوس کی قیادت کررہے تھے کہ ایک شخص تمام سکیورٹی حدود کو پار کرتے ہوئے گاڑی کے نزدیک پہنچ گیا اور وزیراعلیٰ کو زور دار تھپڑ جڑ دیا۔ عام آدمی پارٹی کے ورکز نے تھپڑ مارنے والے شخص کو پکڑ کر پولیس کے حوالے کردیا جہاں اس کی شناخت 33 سالہ سریش کے نام سے ہوئی ہے جو اسپیئر پارٹس کی خرید و فروخت کا کام کرتا ہے تاہم تھپڑ رسید کرنے کی وجہ تاحال سامنے نہیں آسکی ہے۔ یہ پہلی مرتبہ نہیں جب اروند کجروال کو تھپڑ رسید کیا گیا ہو اس سے قبل نومبر 2018 میں ان پر مرچیں پھینکی گئی تھی، 2016 میں ایک شخص نے جوتا اچھالا تھا اور ایک خاتون نے سیاہی بھی پھینکی تھی جب کہ 2014 میں ایک رکشہ ڈرائیور نے بھی ان کے چہرے پر تھپڑ رسید کیا تھا۔

News Code 1890263

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 7 =