پنجاب میں ایک جوڑےکو نامعلوم ملزمان نے درخت سے لٹکا کر پھانسی دے دی

پاکستان کے صوبہ پنجاب کے شہر قصور میں بائی پاس کےقریب ایک جوڑےکو نامعلوم ملزمان نے درخت سے لٹکا کر پھانسی دے دی، درخت سے لٹکتی لاشوں کے باعث علاقے میں خوف و ہراس پھیل گیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے جنگ کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان کے صوبہ پنجاب کے شہر قصور میں بائی پاس کےقریب ایک جوڑےکو نامعلوم ملزمان نے درخت سے پھندا باندھ کر لٹکا کر پھانسی دے دی، درخت سے لٹکتی لاشوں کے باعث علاقے میں خوف و ہراس پھیل گیا ہے۔ عینی شاہدین کے مطابق صبح صبح کھیتوں میں گئے تو ایک درخت سے لٹکتی جوڑے کی لاشیں دیکھیں، لڑکی برقع پوش تھی، جبکہ لڑکے نے سرخ جیکٹ اور شلوار قمیص پہن رکھی تھی۔پولیس کے مطابق پلاسٹک کی رسی سے لٹکتی لاشوں کے پاؤں زمین سے ٹکرا رہے تھے، جبکہ ان سے کچھ ہی دور ایک رکشہ بھی کھڑا تھا۔پولیس کا کہنا ہے کہ لاشیں اتار کر لڑکے کی تلاشی لی گئی تو اس کی جیب سے شناختی کارڈ اور موبائل فون برآمد ہوا، مقتول لڑکے کا نام حسنین، عمرتقریباً 25 سال اور منیر شہید روڈ اچھرہ لاہور کا رہائشی ہے۔پولیس کا مزید کہنا ہے کہ لڑکی کی عمر 16/17سال کے لگ بھگ ہے، جس کی شناخت ابھی نہیں ہو سکی، قاتلوں کی جانب سے دونوں کو یہاں لا کر قتل کر کے واقعے کو خودکشی کا رنگ دینےکی کوشش کی گئی ہے۔ پولیس نے یہ بھی بتایا کہ لاشیں پوسٹمارٹم کے لیے اسپتال بھجوا کر مختلف پہلوؤں پر تفتیش شروع کر دی گئی ہے، فرانزک ٹیموں نے بھی جائے وقوع سے نمونے حاصل کر لیے ہیں۔پولیس کے مطابق مقتولین کے ورثاء سے بات چیت،پوسٹ مارٹم اور فرانزک رپورٹس ملنے پر ہی حقائق سامنے آئیں گے۔

News Code 1886413

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 1 =