امریکی صدر ٹرمپ  نے ترکی کو بھی دھمکی دیدی

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ترکی کو دھمکی دیتے ہوئے کہا ہےکہ اگر ترکی نے ناکام فوجی بغاوت میں ملوث پادری کو رہا نہیں کیا تو اسے سخت پابندیوں کا سامنا کرنا پڑے گا۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹرپر ترکی کو دھمکی دیتے ہوئے کہا ہےکہ اگر ترکی نے ناکام فوجی بغاوت میں ملوث  پادری کو رہا نہیں کیا تو اسے سخت پابندیوں کا سامنا کرنا پڑے گا۔ اطلاعات کے مطابق ٹرمپ نے اپنی ایک ٹویٹ میں ترکی میں فوجی بغاوت کے جرم میں قید مسیحی رہنما پادری اینڈریو برونسن کی رہائی کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر ترکی نے ایسا نہیں کیا تو اُسے امریکہ کی جانب سے سخت اور بڑے پیمانے پر پابندیوں کا سامنا کرنا پڑے گا۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنی ٹویٹ میں مزید کہا کہ مسیحی رہنما چرچ کے پادری ہونے کے ساتھ ساتھ ایک نفیس انسان اور اپنے خاندان کی دیکھ بحال و محبت کرنے والے فرد ہیں جنہیں ترکی میں سخت اذیت اور پریشانیوں کا سامنا ہے چنا نچہ اپنے عقیدے پر کاربند ایک معصوم شخص کو اب جلد از جلد رہا ہو جانا چاہیئے۔

اس سے قبل  امریکی نائب صدر مائیک پینس نے بھی پادری اینڈریو بروسن کی رہائی کے لیے سخت زبان استعمال کرتے ہوئے ترکی کو تنبیہہ کی تھی کہ امریکا سے تعلق رکھنے والے مسیحی پادری کو رہا کر ے ورنہ اس کے خلاف پابندیاں عائد کر دی جائیں گی۔ ادھر امریکہ ترکی کے بار بار مطالبہ کے باوجود ناکام فوجی بغاوت میں ملوث فتح اللہ گولن کو ترکی کے حوالے کرنے سے انکار کررہا ہے۔

واضح رہے کہ 2016 میں ناکام فوجی بغاوت میں معاونت کے جرم میں امریکہ سے تعلق رکھنے والے پادری کو حراست میں لے لیا گیا تھا تاہم بدھ کے روز عدالت نے امریکی پادری کو جیل سے ان کے گھر منتقل کر کے نظربند رکھنے کے احکامات جاری کیے تھے۔ ذرائع کے مطابق 2016 میں ترکی میں ہونے والی فوجی بغاوت کے پیچھے امریکہ ، اسرائیل اور سعودی عرب کا ہاتھ تھا۔

News Code 1882573

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 1 =