ترک صدر نے امریکہ کو وحشی اور جنگلی بھیڑیا قراردیدیا

ترکی کے صدر رجب طیب اردوغان نے امریکہ کی جانب سے ترکی پر مزید مزید پابندیاں عائد کرنے پر کہا ہے کہ امریکہ کا رویہ جنگلی اور وحشی بھیڑیوں کے جیسا ہے اور امریکہ قابل اعتماد ملک نہیں ہے۔

مہر خبـررساں ایجنسی نے آناتولی کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ ترکی کے صدر رجب طیب اردوغان نے امریکہ کی جانب سے  ترکی پر مزید مزید پابندیاں عائد کرنے پر کہا ہے کہ امریکہ کا رویہ جنگلی اور وحشی  بھیڑیوں کے جیسا ہے اور امریکہ قابل اعتماد ملک نہیں ہے۔ ترک صدر رجب طیب اردوغان نے کہا کہ ہمیں ڈالر کی اجارہ داری کے خاتمے کے لیے بتدریج کام کرنا ہوگا جس کے لیے ہمیں اپنی قومی کرنسی میں تجارت کو فروغ دینا ہوگا۔ ترک صدر نے  کہا کہ امریکہ کا رویہ جنگلی بھیڑیوں جیسا ہے اس پر بھروسا نہ کیا جائے، ڈالر کے استعمال سے ہمیں صرف نقصان ہی پہنچا ہے ہم اس کا استعمال بند کردیں گے تب ہی ہم کامیاب ہوں گے۔

ترک میڈیا کے مطابق امریکی پادری کے معاملے پر کشیدگی کے بعد سے حکومت ڈالر کے بجائے اپنی کرنسی لیرا میں دیگر ممالک کے ساتھ تجارت اور سرمایہ کاری کی مسلسل کوششوں میں مصروف ہے۔ اس ضمن میں روس، ایران اور ترکی کے درمیان بات چیت جاری ہے۔

خیال رہے کہ ترکی میں فوجی بغاوت کے لیے مدد دینے کے الزام پر امریکی جاسوس  پادری کی ترکی میں گرفتاری کے بعد سے دونوں ممالک کے درمیان سخت کشیدگی جاری ہے کیوں کہ ترکی نے پادری کو رہا کرنے کے امریکی مطالبے کو یکسر مسترد کردیا ہے ادھر امریکہ نے ناکام فوجی بغاوت کے ماسٹر مائنڈ فتح اللہ گولن کو ترکی کے حوالے کرنے سے انکار کردیا ہے۔

News Code 1883614

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 7 + 4 =