سعودی عرب میں پہلی بارخواتین کی میراتھن دوڑ کے مقابلے کا اہتمام

سعودی عرب میں خواتین کے سلسلے میں افراط اور تفریط کا سلسلہ جاری ہے سعودی عرب میں جہاں خواتین کو پہلے بہت سے سماجی امور سے دور رکھا گيا وہاں آج عورتوں کو کھلی آزادی دی جاری ہے۔ سعودی عرب میں اسلامی احکام میں تبدیلیاں امریکی حکم کے مطابق کی جاتی ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے کی رپورٹ کے مطابق  سعودی عرب میں خواتین کے سلسلے میں افراط اور تفریط کا سلسلہ جاری ہے سعودی عرب میں جہاں خواتین کو پہلے بہت سے سماجی امور سے دور رکھا گيا وہاں آج عورتوں کو کھلی آزادی دینے کا سلسلہ جاری ہے سعودی عرب میں عورتوں کو کھلی آزادی دینے کا سلسلہ امریکی صدر ٹرمپ کے دورہ سعودی عرب کے بعد آغاز ہوا ہے سعودی عرب میں اسلامی احکام میں تبدیلیاں امریکی حکم کے مطابق کی جاتی ہیں۔ العربیہ کے مطابق ہفتے کو سعودی عرب میں میراتھن کا اہتمام کیا گیا جس میں امریکہ، تھائی لینڈ اور دیگر ملکوں کی خواتین سمیت 1500خواتین نے حصہ لیا۔ امریکی حکام اشاروں پر سعودی عرب کے مدارس کے نصاب میں بھی تبدیلی لائی جارہی ہے۔ سعودی عرب کے ولیعہد محمد بن سلمان کو اس سلسلے میں امریکی حکام نے خصوصی ٹاسک دے رکھا ہے۔ سعودی عرب میں عورتوں کی پہلے والی صورتحال بھی اسلامی آئین کے مطابق نہیں تھی اورموجودہ تبدیلی بھی اسلامی دستورات کے مطابق نہیں ہے ذرائع کے مطابق سعودی عرب حقیقی اسلام سے بہت دور اور امریکی اسلام سے بہت قریب ہے وہابیت اور دہشت گردی کے فروغ کے سلسلے میں امریکہ اور سعودی رعب کا مشترکہ اتحاد ہے۔

News Code 1879154

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 3 + 0 =