امریکہ اور روس کے تعلقات تیزی سے ختم ہونے کی طرف بڑھ رہے ہیں

روس کے نائب وزیر خارجہ نے امریکہ کو خبردارکرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکہ اور روس کے تعلقات تیزی سے ختم ہونے کی طرف جارہے ہیں، روس نے امریکہ کی پابندیوں کا مقابلہ کرنے کے اقدام کررکھے ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے اسپوٹنک کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ روس کے نائب وزیر خارجہ سرگئی ریابکوف نے امریکہ کو خبردارکرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکہ اور روس کے تعلقات تیزی سے ختم ہونے کی طرف جارہے ہیں، روس نے امریکہ کی پابندیوں کا مقابلہ کرنے کے اقدام کررکھے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ امریکہ کو روس کے خلاف دھمکیوں کا سلسلہ بند کرنا چاہیے اور روس کے بجائے یوکرائن پر دباؤ ڈالنا چاہیے تاکہ وہ روس کے شرائط کو قبول کرلے۔ اس نے کہا کہ ہمیں یقین ہے کہ امریکہ کیف پر کوئي دباؤ نہیں ڈالے کیونکہ کیف امریکی مفادات کے لئے کام کررہا ہے۔ ریابکوف نے کہا کہ امریکہ کی پابندیوں سے روس کے عزم و ارادہ پر کوئي اثر نہیں پڑےگا۔ اس نے کہا کہ امریکہ کو یوکرائن میں بیولوجیک ہتھیاروں کے ذخائر کے بارے میں دنیا کو آگاہ کرنا چاہیے۔ واضح رہے کہ اس سے قبل روس نے ماسکو میں امریکی سفیرکودفترخارجہ طلب کرکے صدرپوتین سے متعلق امریکی صدر بائیڈن  کے بیان کوناقابل قبول قراردیا تھا۔امریکی سفیرکواحتجاجی مراسلہ بھی دیا گیا۔

روسی ذرائع کے مطابق امریکی سفیرکودئیے گئے احتجاجی مراسلے میں روس کا کہنا تھا کہ امریکی صدرجوبائیڈن کے صدر پوتین سے متعلق بیان  نے دونوں ممالک کے تعلقات کوخطرے میں ڈال دیا ہے۔اس طرح کے بیانات امریکی صدرکے عہدے کے شایان شان نہیں۔اس قسم کے بیانات دونوں ممالک کے تعلقات کے خاتمے کا سبب بن سکتے ہیں۔ امریکی صدر نے پوتین کو جنگی مجرم قراردیا تھا ، جبکہ امریکہ خود افغانستان،عراق، شام ، فلسطین، لیبیا  اور یمن میں جنگي جرائم کا ارتکاب کررہا ہے۔

News Code 1910240

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 7 + 7 =