افغانستان کے سابق صدر اشرف غنی کے دل میں فتور تھا

پاکستان کے وزیر داخلہ شیخ رشید احمد نے کہا ہے کہ پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان نے افغان سابق صدر اشرف غنی کو سمجھانے کی کوشش کی لیکن ان کے دل میں فتور تھا۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایکس پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان کے  وزیر داخلہ شیخ رشید احمد نے اسلام آباد میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان نے افغان سابق صدر اشرف غنی کو سمجھانے کی کوشش کی لیکن ان کے دل میں فتور تھا۔ شیخ رشید احمد نے کہا کہ دنیا میں پاکستان بہت اہم ملک ہے، طالبان کو تسلیم کرنا یا نہ کرنا عمران خان اور وزارت خارجہ کا فیصلہ ہوگا،پاکستان نے امریکہ اور طالبان کو مذاکرات کی میز پر لانے میں اہم کردار ادا کیا،پاکستان کو قربانی کا بکرا بنانے کی سازش ناکام ہوئی ہے، وزیر اعظم کو عمران خان کواندازہ تھا کہ اشرف غنی بہت زیادہ غلط فہمی کا شکار تھا، انہوں نے ازبکستان میں اشرف غنی کو سمجھانے کی بڑی کوشش کی لیکن اشرف غنی کے دل میں فتور تھا۔

شیخ رشید نے کہا کہ طورخم اور چمن پر کوئی رکاوٹ موجود نہیں، سرحد پر پاک افواج اور سول آرمڈ فورسز موجود ہیں، طورخم سے کابل کا راستہ کلیئر ہے، اب تک ہم 613 پاکستانیوں کو افغانستان سے واپس لاچکے ہیں، دو دن میں کابل سے تمام پاکستانیوں کو واپس لانے کا فیصلہ کیا ہے۔ افغانستان میں پھنسے غیر ملکیوں کو ٹرانزٹ ویزا دے رہے ہیں، غیر ملکی سفارت کاروں اور بین الاقوامی میڈیا کے نمائندوں کو پاکستان پہنچنے پر ویزا دیا جائے گا۔

News Code 1907835

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 6 + 10 =