ٹرمپ نے مشترکہ ایٹمی معاہدے سے خارج ہوکر تاریخی غلطی کا ارتکاب کیا

امریکہ کے سابق وزیر دفاع کے مشیر نے عالمی اداروں کو نامعتبر بنانے کے سلسلے میں امریکی صدر ٹرمپ کے اقدامات پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکی صدر ٹرمپ نے مشترکہ ایٹمی معاہدے سے خارج ہوکر تاریخی غلطی کا ارتکاب کیا۔

مہر خبررساں ایجنسی کے بین الاقوامی امور کے نامہ نگار کے ساتھ گفتگو میں امریکہ کے سابق وزیر دفاع کے مشیراور عالمی تجزیہ نگار پروفیسرجوزف نای نے عالمی اداروں کو نامعتبر بنانے کے سلسلے میں امریکی صدر ٹرمپ کے اقدامات پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکی صدر ٹرمپ نے مشترکہ ایٹمی معاہدے سے خارج ہوکر تاریخی غلطی کا ارتکاب کیا۔

جوزف نای نے کہا کہ امریکی صدر کی غفلت کی وجہ سے کورونا نے امریکہ بھر کو اپنی لپیٹ میں لےرکھا ہے اور اب تو امریکی صدر ٹرمپ خود بھی کورونا وائرس میں مبتلا ہوگئے ہیں۔

جوزف نای نے سن 2020 میں امریکی صدارتی انتخابات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ امریکہ کے صدارتی انتخابات کے نتیجے میں امریکہ کی خارجہ پالیسی میں کوئي تبدیلی رونما نہیں ہوگي۔

اس نے کہا کہ انتخاباتی اعداد و شمار کے مطابق جو بائیڈن اپنے حریف ٹرمپ سے آگے ہیں۔ لیکن انتخابات کے نتائج اگر ٹرمپ کے لئے نقصاندہ ثابت ہوئے تو ٹرمپ اقتدار چھوڑنے میں پس و پیش کرےگا۔

جوزف نای نے کہا کہ امریکی صدر نے عالمی اداروں کی اہمیت کو ختم کردیا ہے اور امریکی صدر کے اقدامات عالمی قوانین کے سراسر خلاف ہیں امریکی صدر کو علمی قوانین کا پاس و لحاظ رکھنا چاہیے۔

News Code 1903386

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • captcha