ایران کے تیل بردار جہاز پر 2 راکٹوں سے حملہ کیا گیا

بحیرہ احمر میں سعودی ساحل کے قریب ایرانی آئل ٹینکر پر2 راکٹوں سے حملہ کیا گیا جس کے نتیجے میں آئل ٹینکر سے خام تیل سمندر میں خارج ہورہا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے غیر ملکی ذرائع کے حوالے  سے نقل کیا ہے کہ بحیرہ احمر میں سعودی ساحل کے قریب ایرانی آئل ٹینکر پر2 راکٹوں سے حملہ کیا گیا جس کے نتیجے میں آئل ٹینکر سے خام تیل سمندر میں خارج ہورہا ہے۔

اطلاعات کے مطابق سعودی بندرگاہ جدہ سے 60 کلومیٹر فاصلے پر ایرانی آئل ٹینکر کو 2 راکٹوں سے نشانہ بنایا گیا۔ جس کے نتیجے میں خوفناک آگ بھڑک اُٹھی اور دھوئیں کے سیاہ بادل چھا گئے۔ آئل ٹینکر کا ایک حصہ تباہ ہونے کے باعث تیل بحیرہ احمر میں لیک ہونا شروع ہو گیا۔

سعودی میڈیا نے انکشاف کیا کہ دھماکہ آئل ٹینکر کو لگنے والے دو راکٹوں کی وجہ سے ہوا ۔ ادھر ایران کا کہنا ہے کہ ایرانی تیل بردار جہاز کو دہشت گردانہ حملے سے نشانہ بنایا گیا ہے۔ ایرانی حکام کا کہنا ہے کہ جہاز میں موجود عملہ محفوظ ہے، دھماکے سے جہاز میں پیدا ہونے والے سوراخوں کو بند کرکے خام تیل کے بہنے کے عمل کو روک دیا گیا ہے اور اب حالات عملے کے کنٹرول میں ہیں۔

News Code 1894486

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 3 + 4 =