ایران کا مشترکہ ایٹمی معاہدے پرعمل روکنے کے سلسلے تیسرا قدم اٹھانے کا اعلان

اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیرخارجہ نے کہا ہے کہ موجودہ صورتحال کے مد نظر ہم مشترکہ ایٹمی معاہدے کی بعض شقوں پر عمل درآمد روکنے سے متعلق تیسرا قدم اٹھائیں گے.

مہر خبررساں ایجنسی کے نامہ نگار کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیرخارجہ نے کہا ہے کہ موجودہ صورتحال کے مد نظر ہم مشترکہ ایٹمی معاہدے کی بعض شقوں پر عمل درآمد روکنے سے متعلق تیسرا قدم اٹھائیں گے۔ محمد جواد ظریف نے مزید کہا کہ اگر فریق مقابل اپنے وعدوں پر عمل نہیں کرےگا تو ایران کے پاس بھی یہ حق محفوظ ہے کہ وہ اپنے وعدوں پر عمل کرے یا نہ کرے.
ظریف نےکہا کہ مشترکہ ایٹمی معاہدے کے کمیشن کے رکن ممالک نے اس بات پر اتفاق کیا کہ امریکہ ہر قسم کی کشیدگی کا ذمہ د ارہے

ایرانی وزیر خارجہ نے کہا کہ ہمارے تمام اقدامات جوہری معاہدے کے فریم ورک کے تحت ہیں، ہم نے کہا تھا کہ اگر دوسرے فریقین اپنے وعدوں پر مکمل عمل نہ کریں تو ایران اپنے جوہری وعدوں میں کمی لائے گا.
انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ موجودہ صورتحال کو دیکھتے ہوئے ہم جوہری معاہدے کی بعض شقوں پر عمل درآمد روکنے سے متعلق تیسرا قدم اٹھائیں گے اور ایران کے پاس یہ حق محفوظ ہے کہ وہ اپنے وعدوں پر عمل کرے یا نہ کرے.
 

News Code 1892669

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 5 + 0 =