شمالی کوریا کا امریکہ پر جزیرہ نما کوریا کے پرامن کو نقصان پہنچانے کا الزام

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور شمالی کوریا کے سربراہ کے درمیان ملاقات کے چند روز بعد ہی شمالی کوریا نے الزام عائد کیا ہے کہ امریکہ شمالی کوریا کے خلاف جارحانہ اقدامات پر کمر بستہ ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے رائٹرز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور شمالی کوریا کے سربراہ کے درمیان ملاقات کے چند روز بعد ہی شمالی کوریا نے الزام عائد کیا ہے کہ امریکہ شمالی کوریا کے خلاف جارحانہ اقدامات پر کمر بستہ ہے۔ اطلاعات کے مطابق اقوامِ متحدہ میں شمالی کوریا کے مشن نے کہا ہے کہ جوہری ہتھیاروں کے معاملے پر امریکہ اور شمالی کوریا کے سربراہان کے درمیان حالیہ ملاقات اور مذاکرات کے بحالی کے باوجود امریکہ جارحانہ اقدامات پر تلا ہوا ہے اور امریکہ کو پابندیاں لگانے کا جنون ہے جب کہ واشنگٹن جزیرہ نما کوریا کے پرامن ماحول کو نقصان پہنچانے کی کوشش کررہا ہے۔واضح رہے امریکہ، فرانس، جرمنی اور برطانیہ کی جانب سے اقوام متحدہ کے تمام ممبران کو خط بھیجا گیا ہے جس میں شمالی کوریا پر مزید پابندیوں اور شمالی کوریا کے ورکرز کو ملک بدر کرنے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔ شمالی کوریا کے وفد نے اقوام متحدہ کے تمام ممبران کو خبردار کیا کہ امریکہ کی جانب سے جان بوجھ کر شمالی کوریا کے پرامن ماحول کو خراب کرنے کی کوشش سے محتاط رہنا ہوگا۔

News Code 1891894

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 5 =