بنگلہ دیش میں پارلیمانی انتخابات میں ہلاکتوں کی تعداد 15  تک پہنچ گئی

بنگلہ دیش میں پارلیمانی انتخابات کے دوران سیاسی کارکنوں میں جھڑپوں اور پولیس فائرنگ سے ہلاک ہونے والے افراد کی تعداد 15 تک پہنچ گئی ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایسوسی ایٹڈ پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ بنگلہ دیش میں پارلیمانی انتخابات کے دوران سیاسی کارکنوں میں جھڑپوں اور پولیس فائرنگ سے ہلاک ہونے والے افراد کی تعداد 15 تک پہنچ گئی ہے۔ بنگلہ دیش میں گیارہویں عام انتخابات میں پولنگ کے دوران مختلف پر تشدد واقعات میں 15 افراد ہلاک ہوگئے جبکہ اس دوران اپوزیشن کے حامیوں کو دھمکیوں اور حکمراں جماعت عوامی لیگ پارٹی کو ووٹ دینے پر مجبور کرنے کی شکایات بھی موصول ہوئی ہیں۔ اطلاعات کے مطابق بنگلہ دیش میں آج 30 دسمبر کو ہونے والے انتخابات کو موجودہ وزیراعظم شیخ حسینہ واجد کی طاقت ور حکمرانی کی وجہ سے ایک ریفرنڈم قرار دیا جارہا ہے جس میں تیسری مدت کے لیے شیخ حسینہ واجد کے منتخب ہونے کے امکانات زیادہ ہیں۔ واضح رہے کہ شیخ حسینہ واجد کی حریف بنگلہ دیش نیشنلسٹ پارٹی کی سربراہ اور اپوزیشن لیڈر خالدہ ضیا کو بدعنوانی کے الزامات میں قید کی سزا کے بعد نااہل قرار دیا گیا تھا ۔اس مرتبہ بنگلہ دیش کے انتخابات میں 10 کروڑ 40 لاکھ افراد ووٹ دینے کے اہل ہیں جن میں سے اکثر نوجوانوں نے پہلی مرتبہ حق رائے دہی کا استعمال کیا۔

News Code 1886894

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 4 + 9 =