جرمنی نے 18 سعودی شہریوں کے داخلے پر پابندی عائد کردی

جرمنی کے وزیر خارجہ نے جمال خاشقجی کے قتل میں ملوث 18 سعودی عرب کے اہلکاروں پر جرمنی میں داخل ہونے پر پابندی عائد کردی ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے اسپوٹنک کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ جرمنی کے وزیر خارجہ نے جمال خاشقجی کے قتل میں ملوث 18 سعودی عرب کے اہلکاروں پر جرمنی میں داخل ہونے پر پابندی عائد کردی ہے۔

جرمن وزیر خارجہ نے برسلز میں خطاب کرتے ہوئے کہا کہ خاشقجی کے قتل میں ملوث 18 سعودی حکام پر جرمنی اور دیگر یورپی ممالک  میں داخل ہونے پر پابندی عائد کردی ہے ۔ اس نے کہا کہ جرمنی خفیہ اداروں کے مطابق سعودی عرب کے 18 حکام استنبول میں سعودی عرب کے قونصل خانہ میں خاشقجی کے بہیمانہ قتل میں ملوث ہیں۔ جرمن حکومت نے اس سے قبل سعودی عرب سے مطالبہ کیا تھا کہ وہ خاشقجی کے بہیمانہ قتل کی تحقیقات صاف اور شفاف طریقہ سے انجام دے ۔ ذرائع کے مطابق خاشقجی کے قتل میں سعودی عرب کے ولیعہد براہ راست ملوث ہیں۔ عرب ذرائع کے مطابق خاشقجی کو محمد بن سلمان کے حکم پر2 اکتوبر کو ترکی کے شہر استنبول میں سعودی عرب کے قونصل خانہ میں بڑی بے رحمی اور بے دردی کے ساتھ   قتل کیا گیا۔

News Code 1885769

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 6 + 6 =