صحافیوں کی عالمی تنظیم نے سعودی عرب کے ولیعہد کے خلاف مقدمہ دائر کردیا

صحافیوں کی عالمی تنظیم رپورٹرز وِدآؤٹ بارڈرز " آر ایس ایف" نے صحافی جمال خاشقجی کے قتل سے متعلق سعودی عرب کے ولیعہد محمد بن سلمان اور دیگر 4 اعلیٰ سعودی عہدیداران کے خلاف جرمنی میں کرمنل کیس دائر کردیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے اے پی کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ صحافیوں کی عالمی تنظیم رپورٹرز وِدآؤٹ بارڈرز " آر ایس ایف" نے صحافی جمال خاشقجی کے قتل سے متعلق سعودی عرب کے ولیعہد محمد بن سلمان اور دیگر 4 اعلیٰ سعودی عہدیداران کے خلاف جرمنی میں کرمنل کیس دائر کردیا ہے۔ اطلاعات کے مطابق جرمنی کے وفاقی پراسیکیوٹرزکے دفتر کا کہنا ہے کہ اسے فرانس کی تنظیم کی جانب سے شکایت موصول ہوئی ہے۔

رپورٹرز ودآؤٹ بارڈرز نے کہا کہ شکایت میں معاملے سے متعلق چند روز قبل جاری ہونے والی امریکی انٹیلی جنس رپورٹ پر جزوی انحصار کرتے ہوئے سعودی ولیعہد محمد بن سلمان، ان کے قریبی ساتھی سعود القحطانی اور دیگر تین اعلیٰ سعودی عہدیداران کو مرکزی ملزمان نامزد کیا گیا ہے۔

تنظیم کے بیان میں کہا گیا کہ ان افراد کو جمال خاشقجی کے قتل میں ان کی تنظیمی یا ایگزیکٹو کردار اور صحافیوں پر حملے اور انہیں خاموش کرانے کے لیے ریاستی پالیسی کی تشکیل میں کردار ادا کرنے کی وجہ سے مقدمہ میں نامزد کیا گیا ہے۔

جرمنی کے قانونی نظام کے تحت کوئی بھی پراسیکیوٹرز کے پاس کسی کے خلاف شکایت درج کرا سکتا ہے اور پراسیکیوٹرز پر لازم ہے کہ وہ ان الزامات کی تحقیقات کریں اور اس کی روشنی میں فیصلہ کریں کہ ان الزامات کی مکمل تحقیقات شروع کی جائے یا نہیں۔

جرمنی کے قانون کے تحت پراسیکیوٹرز، انسانیت کے خلاف جرائم میں عالمی دائرہ اختیار کا دعویٰ کر سکتے ہیں ۔

خیال رہے کہ گزشتہ جمعہ کو امریکی انٹیلی جنس رپورٹ جاری کی گئی تھی جس میں کہا گیا تھا کہ سعودی ولیعہد محمد بن سلمان نے جمال خاشقجی کے قتل کا حکم دیا تھا۔

News Code 1905495

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 4 + 2 =