ہمارے خطے میں بدامنی اور کشیدگی کا اصلی سبب امریکہ ہے

اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر حسن روحانی نے ہالینڈ کے وزیر خارجہ کے ساتھ ملاقات میں خطے میں امریکہ کی موجودگی کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہمارے خطے میں بدامنی اور کشیدگی کا اصلی سبب امریکہ ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر حسن روحانی نے ہالینڈ کے وزیرخارجہ  اسٹف بلک کے ساتھ ملاقات میں خطے میں امریکہ کی غیر منطقی اور غیر قانونی موجودگی کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہمارے خطے میں بدامنی اور کشیدگی کا اصلی سبب امریکہ ہے۔

صدر حسن روحانی نے کہا کہ ایران کی خارجہ پالیسی دیگر ممالک کے ساتھ تعمیری گفتگو پر مشتمل ہے ہم دیگر ممالک اورخاص طور پر یورپی ممالک کے ساتھ تعلقات کو مضبوط بنانے کے خواہاں ہیں۔

صدر روحانی نے امریکہ کی یکطرفہ اور ظالمانہ پابندیوں کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ امریکی پابندیوں نے ایرانی عوام کی طبی اورغذائی اشیا کو بھی نشانہ بنا رکھا ہے۔

صدر حسن روحانی نے مشترکہ ایٹمی معاہدے سے امریکہ کے خارج ہونے کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ مشترکہ ایٹمی معاہدے کے سلسلے میں یورپی ممالک نے بھی اپنے وعدوں پر عمل نہیں کیا۔

صدر روحانی نے کہا کہ امریکہ خلیج فارس اور دنیا کے دوسرے علاقوں میں بدمانی کا اصلی سبب اور دہشت گردوں کا سب سے بڑا حامی ملک ہے۔ امریکی صدر بارہا اس بات کا اعتراف کرچکے ہيں کہ داعش دہشت گرد گروہ کی تشکیل اور بنیاد  میں امریکہ کا بنیادی کردار ہے۔

اس ملاقات میں ہالینڈ کے وزیر خارجہ نے مشترکہ ایٹمی معاہدے کو باقی رکھنے پر تاکید کرتے ہوئے کہا کہ ہالینڈ ایران کے ساتھ دو طرفہ تعلقات کو فروغ دینے کا خواہاں ہے۔

News Code 1898063

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 8 + 0 =