ابو بکر بغدادی کو امریکہ نے خلیفہ بنایا تھا

روسی وزیر خارجہ سر گئی لاوروف نے کہا ہے کہ وہابی دہشت گرد تنظیم داعش کے سابق سرغنہ ابو بکر البغدادی کو امریکہ نے خلیفہ بنایا تھا۔

مہر خبررساں ایجنسی نے روسیا الیوم کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ روسی وزیر خارجہ سر گئی لاوروف نے کہا ہے کہ وہابی دہشت گرد تنظیم داعش کے سابق سرغنہ ابو بکر البغدادی کو امریکہ نے خلیفہ بنایا تھا۔ روسی وزیر خارجہ سرگئی لاوروف نے داعش دہشت گرد تنظیم کے سربراہ ابوبکر البغدادی کی امریکی فوج کے آپریشن میں ہلاکت کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہاکہ البغدادی امریکہ کی ہی پیداوار تھا۔ امریکہ نے اسے تیار کیا اور ٹشو پیپر کی طرح استعمال کر کے پھینک دیا ۔

روسی  وزیر خارجہ نے دلیل پیش کرتے ہوئےکہا کہ 2003 میں امریکہ امن کا بہانہ بنا کر عراق پر قابض ہوا اور عراق میں جیلوں میں قید خطرناک ترین دہشت گردوں کو رہا کیا جس کے بعد عراق میں داعش نے اپنی جڑیں مضبوط کیں اور ابوبکر البغدادی طاقت ور ہوتا گیا۔

 سرگئی لاوروف نے ابوبکر کی ہلاکت کی تصدیق سے گریز کرتے ہوئے کہا کہ ہماری وزارت دفاع نے اس حوالے سے ایک بیان جاری کیا ہے، ہم اس معاملے میں مزید معلومات حاصل کرنا چاہتے ہیں جس کے لیے روسی فوج اضافی شواہد پر تلاش کر رہی ہے اور اب تک البغدادی کی ہلاکت کی تصدیق نہیں ہوسکی ہے۔ واضح رہے کہ امریکہ نے شام کے سرحدی علاقے میں ایک فوجی آپریشن کے دوران داعش کے سرغنہ ابوبکر البغدادی کی اپنے 3 بچوں اور 2 بیگمات سمیت ہلاک کردیا  اور جس کی تصدیق خود امریکی صدر نے اپنے براہ راست نشر ہونے والے بیان میں کی تھی۔

News Code 1895095

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 4 + 12 =