پاکستانی وزیر خارجہ کی ایران کے صدر سید ابراہیم رئیسی سے ملاقات

پاکستان کے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی تہران کے دورے پر ہیں ، جہاں انھوں نے اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر ڈاکٹر سید ابراہیم رئیسی کے ساتھ صدارتی محل میں ملاقات اور گفتگو کی۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق پاکستان کے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی تہران کے دورے پر ہیں ، جہاں انھوں نے اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر ڈاکٹر سید ابراہیم رئیسی کے ساتھ صدارتی محل میں ملاقات اور گفتگو کی۔ اطلاعات کے مطابق پاکستانی وزیر اعظم کے نمائندہ خصوصی برائے افغانستان ایمبیسڈر محمد صادق ،ایران میں پاکستان کے سفیر رحیم حیات قریشی اور ڈائریکٹر جنرل افغانستان آصف میمن بھی اس ملاقات میں شریک تھے. 

پاکستانی وزیر خارجہ نے وزیر اعظم عمران خان اور پاکستانی قیادت کی جانب سے حالیہ صدارتی الیکشن میں کامیابی پر ایرانی صدر کو مبارکباد دی. 

اس موقع پر وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی نے کہا کہ پاکستان، ایران کے ساتھ دو طرفہ تعلقات کے فروغ اور باہمی دلچسپی کے شعبوں میں تعاون بڑھانے کیلئے پر عزم ہے۔

پاکستانی وزیر خارجہ نے مسئلہ کشمیر کے حوالے سے ایرانی قیادت بالخصوص رہبر معظم انقلاب اسلامی حضرت آیت اللہ العظمی خامنہ ای کی جانب سے پاکستان کے موقف کی مسلسل اور غیر متزلزل حمایت پر ان کا شکریہ ادا کیا. 

پاکستانی وزیر خارجہ نے ایرانی صدر کو افغانستان کی بدلتی ہوئی صورتحال اور علاقائی سلامتی کے حوالے سے، پاکستان کے نقطہ نظر سے آگاہ کیا. 

شاہ محمود قریشی  نے افغانستان کی موجودہ صورتحال کے تناظر میں، علاقائی سطح پر متفقہ اور مربوط لائحہ عمل اختیار کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔ انہوں نے کہا کہ افغانستان میں قیام امن، کا فائدہ پورے خطے کو یکساں طور پر ہو گا۔ پاکستان، افغانستان میں جامع اور ہمہ گیر سیاسی تصفیے کا حامی ہے۔ افغانستان میں قیام امن سے خطے میں تجارت اور روابط کے فروغ میں مدد ملے گی. 

ایرانی صدر ابراہیم رئیسی نے وزیر خارجہ کو ایران آمد پر خوش آمدید کہتے ہوئے، خطے میں امن و استحکام کیلئے مشترکہ لائحہ عمل اختیار کرنے کے حوالے سے پاکستان کی جانب سے کی جانے والی عملی کاوشوں کو سراہا. 

وزیر خارجہ نے صدر رئیسی کو وزیر اعظم عمران خان کی جانب سے دورہ  پاکستان کی دعوت دی جسے انہوں نے شکریہ کے ساتھ قبول کرلیا. 

News Code 1907947

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 6 + 0 =