رہبر معظم انقلاب اسلامی نے حجۃ الاسلام محسنی اژہ ای کو عدلیہ کا نیا سربراہ مقرر کردیا

رہبر معظم انقلاب اسلامی حضرت آیت اللہ العظمی خامنہ ای نے اپنے ایک حکم میں حجۃ الاسلام والمسلمین محسنی اژہ ای کو ایرانی عدلیہ کا نیا سربراہ مقرر کردیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق رہبر معظم انقلاب اسلامی حضرت آیت اللہ العظمی خامنہ ای نے اپنے ایک حکم میں حجۃ الاسلام والمسلمین محسنی اژہ ای کو ایرانی عدلیہ کا نیا سربراہ مقرر کردیا ہے۔

رہبر معظم انقلاب اسلامی نے حجۃ الاسلام والمسلمین غلام حسین محسنی اژہ ای کے نام اپنے حکم میں فرمایا: جناب آقائی رئیسی تیرہویں صدارتی انتخابات میں عوام کے منتخب صدر بن گئے ہیں ، میں ان کی گرانقدر خدمات کا شکریہ ادا کرتے ہوئے آپ کو عدلیہ کا نیا سربراہ مقرر کرتا ہوں۔ رہبر معظم انقلاب اسلامی نے اپنے حکم میں بنیادی آئین میں عدلیہ کی ذمہ داریوں پر عمل پیرا رہنے کے سلسلے میں تاکید کرتے ہوئے فرمایا: عدلیہ میں کارآمد اور جہادی افراد سے استفادہ عدلیہ پر اعتماد اورعدلیہ کی کارکردگی میں مؤثر ثابت ہوگا۔ رہبر معظم انقلاب اسلامی نے اپنے حکم میں عوام کے ساتھ  عدلیہ کے قریبی ارتباط اور کرپشن کے خلاف ٹھوس اقدامات پر بھی تاکید کی ہے۔

رہبر معظم انقلاب اسلامی نے عدلیہ میں جدید ٹیکنالوجی سے استفادہ اور توسیع پر تاکید کرتے ہوئے عوام کو عدلیہ تک آسان اور مفت رسائی پر بھی زوردیا ہے۔

رہبر معظم انقلاب اسلامی نے فاضل ججوں کی خدمات کے اعزاز میں ان کے وقار و احترام کے تحفظ پر بھی تاکید کی ہے۔

رہبر معظم انقلاب اسلامی نے اپنے حکم کے آخر میں عدلیہ کے نئے سربراہ کی توفیقات میں اضافہ اور کامیابی کے سلسلے میں دعا کی۔

News Code 1907196

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 5 =