جیش محمد کے سربراہ مسعود اظہر کو بلیک لسٹ کرنے کا مطالبہ

امریکہ، برطانیہ اور فرانس کی جانب سے اقوام متحدہ کی سیکیورٹی کونسل میں ایک تجویز پیش کی گئی ہے، جس میں جیش محمد کے سربراہ مسعود اظہر کو بلیک لسٹ کرنے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے غیر ملکی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکہ، برطانیہ اور فرانس کی جانب سے اقوام متحدہ کی سیکیورٹی کونسل میں ایک تجویز پیش کی گئی ہے، جس میں جیش محمد کے سربراہ مسعود اظہر کو بلیک لسٹ کرنے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔15 ممالک کی سیکیورٹی کونسل 10 روز میں اپنے 5 مستقل رکن ممالک میں سے 3 کی جانب سے پیش کی گئی تجویز پر غور کرسکتی ہے، اقوام متحدہ میں یہ تجویز گزشتہ 10 برسوں کے دوران چوتھی مرتبہ پیش کی گئی ہے کہ جیش محمد کے سربراہ کو عالمی دہشت گردوں کی فہرست میں ڈالا جائے۔ اس تجویز پر چین کی جانب سے مخالفت کا امکان ہے، جس نے ماضی میں 2016 اور 2017 میں سیکیورٹی کونسل کی اسلامک اسٹیٹ اور القاعدہ کمیٹی کو مسعود اظہر پر پابندی سے روک دیا تھا۔ اگر یہ تجویز منظور ہوجاتی ہے تو پاکستان کے لیے مسعود اظہر اور ان کی تنظیم سے تعلق رکھنے والے فنڈز اور دیگر مالی اثاثوں کو منجمد کرنا ضروری ہوگا۔

واضح رہے کہ بھارت کی جانب سے 14 فروری کے بعد سے مسعود اظہر کا نام اقوام متحدہ کی عالمی دہشت گردوں کی فہرست میں ڈالنے کے لیے کوششیں تیز کردی گئی ہیں۔

News Code 1888496

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 5 + 3 =