برطانوی پارلیمنٹ میں بریگزٹ ڈیل مسترد

برطانوی ہاﺅس آف کامن نے ووٹنگ میں یورپی یونین سے انخلا کی بریگزٹ ڈیل کو مسترد کردیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے برطانوی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ برطانوی ہاﺅس آف کامن نے ووٹنگ میں یورپی یونین سے انخلا کی بریگزٹ ڈیل کو مسترد کردیا ہے۔

پارلیمان میں ہونے والی ووٹنگ میں ڈیل کے حق میں 202 اور مخالفت میں 432 ووٹ پڑے ہیں۔ برطانوی وزیر اعظم تھریسامے کو اس حوالے سے 230 ووٹوں سے شکست کا سامنا کرنا پڑا ہے۔ بریگزٹ ڈیل پر ووٹنگ میں ناکامی کے بعد برطانوی وزیر اعظم تھریسامے پر استعفیٰ کا دباﺅ بڑھ گیا ہے جبکہ جنرل الیکشن کی آوازیں بھی اٹھنے لگی ہیں۔

دوسری جانب برطانوی پارلیمنٹ نے آئرش بارڈر بند کرنے کی ترمیم پر ووٹنگ میں بارڈر بند کرنے کے حوالے سے اختیار حکومت کو دے دیا ہے۔ ترمیم کے حق میں 600 اور مخالفت میں 24 ووٹ ڈالے گئے ہیں۔

خیال رہے کہ برطانیہ میں ایک ریفرنڈم کے بعد یورپی یونین سے انخلا کا عمل شروع کیا گیا تھا۔ یورپی یونین سے انخلا کے عمل کو بریگزٹ کا نام دیا گیا ہے۔ اگر پارلیمنٹ بریگزٹ کے حق میں ووٹ دے دیتی تو برطانیہ 29 مارچ 2019 کے بعد یورپی یونین کا حصہ نہ رہتا۔

News Code 1887326

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 4 + 2 =