پینٹاگون نے آدھی امریکی فوج کو افغانستان سے واپس بلانے کی مخالفت کردی

امریکی وزارت دفاع پینٹاگون کی جانب سے حکمت عملی دستاویزات کانگریس میں جمع کروادیے گئے جس میں انہوں نے واضح طور پر صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا افغانستان سے تقریباً آدھی امریکی فوج واپس بلانے کے فیصلے کی مخالفت کی ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایسوسی ایٹڈ پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکی وزارت دفاع پینٹاگون کی جانب سے حکمت عملی دستاویزات کانگریس میں جمع کروادیے گئے جس میں انہوں نے واضح طور پر صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا افغانستان سے تقریباً آدھی امریکی فوج واپس بلانے کے فیصلے کی مخالفت کی ہے۔ پینٹاگون نے کانگریس کو بتایا کہ امریکہ کو افغانستان میں نہ صرف اپنی فوج کی موجودگی کو یقینی بنانا چاہیے بلکہ فوجیوں کی طالبان کے خلاف کارروائیوں کو بھی برقرار رکھنا چاہیے۔پینٹاگون کے حکمت عملی دستاویزات میں کہا گیا کہ پینٹاگون بالواسطہ اور بلا واسطہ طالبان پر دباؤ برقرار رکھے جس کے ساتھ ساتھ افغان حکومت مقامی سطح پر امن اقدام میں بھی تعاون جاری رکھے۔ پینٹاگون کے مطابق  امریکی فوج کی افغانستان میں موجودگی سے طالبان پر امن مذاکرات کا دباؤ بڑھا ہے۔

News Code 1886716

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 15 =