میانمار حکومت نے93 روہنگیا مسلمانوں کو گرفتار کرلیا

میانمار حکومت نے ملائیشیا ہجرت کرنے کی کوشش کرنے والے 93 روہنگیا مسلمانوں کو گرفتار کرلیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے غیر ملکی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ میانمار حکومت نے ملائیشیا ہجرت کرنے کی کوشش کرنے والے 93 روہنگیا مسلمانوں کو گرفتار کرلیا ہے۔ اطلاعات کے مطابق میانمار کی حکومت نے روہنگیا تارکین وطن کو لے جانے والی ایک کشتی کو ضبط کرلیا ہے۔ کشتی میں 93 روہنگیا مسلمان سوار تھے جو رکھائن کے پناہ گزین کیمپ سے ملائیشیا جانے کی کوشش کررہے تھے۔میانمار حکومت نے کشتی میں سوار تمام مسافروں کو حراست میں لے کر نامعلوم مقام پر منتقل کردیا ہے، کشتی میں خواتین اور بچے بھی سوار تھے۔ پناہ گزین خوراک، موسم کی خرابی اور عدم تحفظ کے باعث بیرون ملک ہجرت پر مجبور ہوگئے ہیں۔

رواں ماہ روہنگیا تارکین وطن کی یہ تیسری کشتی کو ضبط کیا گیا ہے، 16 نومبر کو 106 تارکین وطن کی کشتی اور گزشتہ ہفتے 80 تارکین وطن کی کشتی کو ضبط کیا گیا تھا۔ حراست میں لیے گئے افراد کو اب تک رہا نہیں کیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ میانمار میں روہنگیا مسلمانوں کی نسل کشی کے باعث 7 لاکھ سے زائد روہنگیا مسلمان بنگلہ دیش کے پناہ گزین کیمپ میں پناہ لینے پر مجبور ہوئے تھے جب کہ لاکھوں پناہ گزین رکھائن کیمپوں میں تاحال پھنسے ہوئے ہیں، جنہیں میانمار کی حکومت نے اپنا شہری ماننے سے انکار کردیا ہے۔

News Code 1885979

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 2 =