پاکستانی وزير اعظم کا گستاخانہ خاکوں کا مسئلہ اقوام متحدہ اور او آئي سی میں اٹھانے کا اعلان

پاکستان کے وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ پاکستانی حکومت گستاخانہ خاکوں کے کے مسئلہ کو اقوام متحدہ اور او آئي سی میں اٹھانے گی ۔ گستاخانہ خاکوں کا مسئلہ ناقابل برداشت ہے جس کامقابلہ کرنے میں مسلم ممالک ناکام ہوگئے ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایکس پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان کے وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ پاکستانی حکومت گستاخانہ خاکوں کے کے مسئلہ کو اقوام متحدہ اور او آئي سی میں اٹھانے گی ۔ گستاخانہ خاکوں کا مسئلہ ناقابل برداشت ہے جس کامقابلہ کرنے میں مسلم ممالک ناکام ہوگئے ہیں۔ پاکستان کے سینیٹ اجلاس میں ہالینڈ میں گستاخانہ خاکوں کے خلاف مذمتی قرارداد منظور کرلی گئی، قائد ایوان سینیٹر شبلی فراز نے قرارداد پیش کی جس میں کہا گیا کہ نبی اکرم (ص)  سے محبت مسلمانوں کے ایمان کا حصہ ہے، مسلمان اپنے پیغمبر صلی اللہ علیہ و آۂہ وسلم  کی شان میں گستاخی برداشت نہیں کریں گے، گستاخانہ خاکوں کا مسئلہ ناقابل برداشت عمل ہے، حکومت اس مسئلے کو سفارتی سطح پر اٹھائے اور ہالینڈ کی حکومت سے بھرپور احتجاج کیا جائے گا۔ قرارداد کی منظوری کے بعد سینیٹ اجلاس میں اظہار خیال کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ سینیٹ میں گستاخانہ خاکوں کے معاملے پر جو قرارداد پاس کی ہے، اس معاملے کو اقوام متحدہ میں اٹھائیں گے پاکستانی وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ ہم پہلے او آئی سی کو اس معاملے پر متفق کرنے کی کوشش کریں گے، ان چیزوں کا بار بار ہونا مسلم دنیا کی اجتماعی ناکامی ہے۔ انہوں نے کہا کہ او آئی سی کو بہت پہلے اس پر ایک حکمت عملی بنانی چاہیے تھی، مسلمان دنیا پہلے ایک ہو اور ایک چیز پر اکھٹی ہو، پھر اس مسئلے کو آگے اٹھایا جائے اور بتایا جائے کہ توہین رسالتﷺ پر ہمیں کتنی تکلیف ہوتی ہے۔

News Code 1883449

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 6 + 11 =