دارالامان میں عزت محفوظ نہیں

پاکستان کے صوبہ پنجاب کے ضلع ڈیرہ غازی خان میں دارالامان سے فرار ہونے والی لڑکی کو پکڑ کر اہل خانہ کے حوالے کر دیا گیا، لڑکی نے الزام لگایا کہ دارالامان میں اُس کی عزت محفوظ نہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے جنگ کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان کے صوبہ پنجاب کے ضلع ڈیرہ غازی خان میں دارالامان سے فرار ہونے والی لڑکی کو پکڑ کر اہل خانہ کے حوالے کر دیا گیا، لڑکی نے الزام لگایا کہ دارالامان میں اُس کی عزت محفوظ نہیں۔ ڈیرہ غازی خان میں دارالامان سے لڑکی کے فرار اور عملے پرالزامات کا معاملے میں ڈپٹی کمشنر علی اکبر نے واقعے کی تحقیقات کا حکم دیتے ہوئے کہا ہے کہ الزامات درست ثابت ہوئے تو دارالامان کے عملے کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔ واضح رہے کہ گزشتہ روز دارالامان سے 19سال کی لڑکی فرار ہوگئی تھی ، متاثرہ لڑکی نے الزام عائد کیا تھا کہ اُس کی عزت محفوظ نہیں وہ دارالامان میں رہنا نہیں چاہتی۔ دارالامان کی انچارج کا کہنا ہے کہ لڑکی کے لگائے جانے والے الزامات بے بنیاد ہیں، رضا مندی پر لڑکی کو اہل خانہ کے حوالے کر دیا گیا۔

News Code 1883150

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 15 =